جنوبی افریقہ: احتجاجی کان کنوں کی رہائی

آخری وقت اشاعت:  منگل 4 ستمبر 2012 ,‭ 03:22 GMT 08:22 PST

جنوبی افریقہ کی عدالت نے ان کان کنوں کی بڑی تعداد کو رہا کرنے کے احکامات دیے ہیں جن پر احتجاج کے دوران اپنے ساتھیوں کو ہلا ک کرنے کا الزام تھا۔

دو سو ستر کان کنوں نے عدالت کے حکم پر رہائی کی خوشی میں گیت گائے اور رقص کیا۔

گزشتہ ماہ جوہانسبرگ کے شمال مغرب میں واقع ماریکانہ کان میں ہڑتالی کان کنوں اور پولیس کے درمیان جھڑپ میں چونتیس کان کن ہلاک ہوگئے تھے۔

حکام نے احتجاج کے دوران پولیس کی فائرنگ میں ہلاکتوں کے بعد، احتجاجی کان کنوں پر ہی قتل کا مقدمہ چلانے کا اعلان کیا تھا۔

جوہانسبرگ کے مغربی حصے میں مختلف کانوں میں کام کرنے والے بارہ ہزار سے زائد کان کنوں میں بے چینی پھیل رہی ہے اور انہوں نے غیر اعلانیہ طور پر کان بند کر کے ہڑتال کی ہوئی ہے۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔