برطانیہ:مذہبی مبلغ ابو قتادہ ضمانت پر رہا

آخری وقت اشاعت:  منگل 13 نومبر 2012 ,‭ 13:14 GMT 18:14 PST

برطانیہ میں ایک عدالت کی جانب سے مذہبی مبلغ ابو قتادہ کو ملک بدر کر کے اردن بھیجنے کا فیصلہ منسوخ کرنے کے بعد انہیں ضمانت پر رہا کر دیا گیا ہے۔

عدالت کا کہنا ہے کہ ابو قتادہ کو اردن بھیجے جانے کی صورت میں وہاں ان کا مقدمہ غیر جانبدار انداز میں نہیں چلایا جا سکتا ہے۔

ابو قتادہ پر الزام تھا کہ انہوں نے اردن میں بم حملوں کی منصوبہ بندی کی تھی۔

ابو قتادہ کو سات سال حراست میں رکھے جانے کے بعد ورسسٹشائر کی لونگ لارٹن جیل سے رہا کر دیا گیا ہے۔

اس سے پہلے پیر کو مذہبی مبلغ ابو قتادہ کی جانب سے خصوصی امیگریشن کمیشن میں دائر اپیل کی کامیابی کے بعد انہیں ملک بدر کر کے اردن بھیجنے کا فیصلہ منسوخ کر دیا گیا تھا۔

فلسطین میں پیدا ہونے والے اور اردن کے شہری ابو قتادہ کو مجاہدین کے روحانی قائد کے طور پر بیان کیاگیا ہے۔ سکیورٹی اہلکاروں کا ماننا ہے کہ انہوں نے خودکش حملوں کو نظریاتی طور پر پھیلانے میں اہم کردار ادا کیا ہے۔

سنہ دو ہزار ایک سے انہیں برطانیہ میں کئی بار زیرِ حراست رکھا گیا ہے تاہم ان کے خلاف کوئی فردِ جرم عائد نہیں کی گئی۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔