’مردم شماری تک نئی حلقہ بندیاں بلاجواز‘

آخری وقت اشاعت:  بدھ 26 دسمبر 2012 ,‭ 14:29 GMT 19:29 PST

پاکستان کے چیف الیکشن کمشنر جسٹس ریٹائرڈ فخر الدین جی ابراہیم کا کہنا ہے کہ ملک میں جب تک نئی مردم شماری نہیں ہوتی نئی حلقہ بندیاں نہیں ہونی چاہیئیں۔

انہوں نے یہ بات بدھ کو اسلام آباد میں ایک پریس کانفرنس کے دوران کہی۔

جسٹس (ر) فخرالدین کا کہنا تھا کہ ان کی ذاتی رائے میں ایک بار جب آئین کے مطابق مردم شماری کے بعد حلقہ بندیاں ہو جائیں تو آئندہ مردم شماری تک نئی حلقہ بندیاں کرنے کا کوئی جواز نہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ’میں سمجھتا ہوں مردم شماری ہوگئی جس کے مطابق حلقہ بندیاں ہو گئیں۔ ان حلقہ بندیوں کو ہمیں قبول کرنا چاہیے۔ جب تک نئی مردم شماری نہیں ہوتی نئی حلقہ بندیوں کا یہ کوئی وقت نہیں ہے‘۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔