شمالی کوریا سے فرار ہونے والوں میں کمی

آخری وقت اشاعت:  بدھ 2 جنوری 2013 ,‭ 07:08 GMT 12:08 PST

شمالی کوریا سے فرار ہو کر جنوبی کوریا میں پناہ لینے کے خواہشمند افراد میں نمایاں کمی دیکھی گئی ہے۔

جنوبی کوریا میں حکام کا کہنا ہے کہ دو ہزار بارہ میں پندرہ سو سے کچھ زیادہ افراد نے سرحد عبور کر کے پناہ دیے جانے کا مطالبہ کیا جبکہ دو ہزار گیارہ میں یہ تعداد ستائیس سو سے زائد تھی۔

حقوقِ انسانی کے کوریائی کارکنوں کا دعویٰ ہے کہ شمالی کوریا میں کم جونگ ان کی نئی قیادت کے تحت ملک سے لوگوں کا فرار روکنے کے لیے سخت اقدامات کیے گئے ہیں۔

کارکنوں کا یہ بھی کہنا ہے کہ چینی سکیورٹی فورسز کی مدد سے چین میں چھپے ہوئے شمالی کوریائی باشندوں کو بھی تلاش کیا جا رہا ہے۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔