’چین کی نشاۃِ ثانیہ کے لیے جدوجہد کریں گے‘

آخری وقت اشاعت:  پير 18 مارچ 2013 ,‭ 19:50 GMT 00:50 PST

چین میں ایک دہائی کے بعد انتقالِ اقتدار کے بعد شی جن پنگ کو صدر کے طور پر اور لی کیچیانگ کو وزیر اعظم کے طور پر کمیونسٹ جماعت نے باقاعدہ مقرر کیا ہے۔

چین کے نئے صدر شی جن پنگ نے صدر بننے کے بعد اپنی پہلی تقریر میں اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ وہ ’چینی قوم کی خاطر چین کی نشاۃِ ثانیہ کے لیے جدوجہد کریں گے‘۔

چینی صدر چین کی سالانہ قومی کانگریس کے اختتام پر خطاب کر رہے تھے۔

چین میں حال ہی میں ایک دہائی کے بعد ہونے والا انتقالِ اقتدار کا عمل مکمل ہوا ہے جس کے نتیجے میں شی جن پنگ نے صدر کے طور پر اپنا عہدہ سنبھالا ہے۔

اس کے ساتھ ہی نئے چینی وزیر اعظم لی کیچیانگ بھی ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرنے والے ہیں جو کہ چین میں بہت کم ہوتا ہے۔

یاد رہے کہ چین میں وزیر اعظم حکومت کے روزمرہ کے معاملات چلاتے ہیں۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔