’القاعدہ نےمغوی فرانسیسی کو ہلاک کر دیا‘

آخری وقت اشاعت:  بدھ 20 مارچ 2013 ,‭ 03:50 GMT 08:50 PST

شمالی افریقہ میں موجود القاعدہ نے موریطانیہ کی ایک خبر رساں ایجنسی کو بتایا ہے کہ اس نے مغوی فرانسیسی شہری کا سر قلم کر دیا ہے۔

خبر رساں ایجنسی اے این آئی کے مطابق ایک ٹیلی فون کال میں نامعلوم شخص نے خود کو القاعدہ کی شاخ اسلامک المغرب کا ایک ترجمان بتاتے ہوئے کہا کہ فرانسیسی شہری کو مالی میں فرانس کی مداخلت کے نتیجے میں ہلاک کیا گیا۔

ترجمان نے بتایا کہ فرانسیسی شہری فلپ ورڈن کو دس دن پہلے ہلاک کیا گیا۔ انہیں نومبر سال دو ہزار گیارہ میں شمالی مالی سے اغواء کیا گیا تھا۔

فرانسیسی وزارتِ خارجہ کا کہنا ہے کہ وہ ان اطلاعات کی تصدیق کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

The north African branch of al-Qaeda has told a news agency in Mauritania that it has beheaded a French hostage in retaliation for the French intervention in Mali. The ANI news agency said it received a telephone call from someone said to be a spokesman for al-Qaeda in the Islamic Maghreb, saying Philippe Verdon was killed ten days ago. He was captured in November 2011 in the north of Mali. The French foreign ministry said it was trying to verify the reports.

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔