دس چیزیں جن سے ہم گذشتہ ہفتے لاعلم تھے

شطرنج تصویر کے کاپی رائٹ Alamy
Image caption شطرنج جیسے کھیلوں میں خواتین کے جیتے نے کے امکانات میں راک میوزک اضافہ کر سکتا ہے

1۔ شطرنج جیسے بورڈ گیمز کے دوران اگر پس پشت راک موسیقی جاری ہو تو مردوں کے مقابلے خواتین اپنے جیتنے کے امکانات میں اضافہ کر سکتی ہیں۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (ٹیلیگراف)

2۔ دنیا میں قیمے سے بنائی جانے والی پائي کی سب سے بڑی فیکٹری جنوبی یارک شائر کے بارنسلی میں ہے جہاں ایک منٹ میں 720 پائی تیار ہوتی ہے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (گارڈین)

3۔ سی ڈی کی فروخت کی بنیاد پر سنہ 2016 کا سرفہرست موسیقار موزارٹ ہے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (کوارٹز)

4۔ آپ ایک موبائل فون گیم کھیلنے میں دس لاکھ ڈالر تک خرچ کر سکتے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (واشنگٹن پوسٹ)

5۔ ہلیری کلنٹن کی انتخابی مہم کے سربراہ کے خلاف انتخابات سے پہلے کمپیوٹر کی حساس معلومات کے متعلق حملہ ان کے ایک معاون کی جانب سے ہونے والی ٹائپنگ کی ایک غلطی کی وجہ سے کامیاب ہوا۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (نیویارک ٹائمز)

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption اس آبی پرندے کی عمر 66 سال بتائی جا رہی ہے اور یہ پرندہ انڈے پر بیٹھا ہے یعنی اس میں ابھی تک زرخیزی باقی ہے

6۔ برطانیہ کا سب سے کم استعمال ہونے والا ریلوے سٹیشن کیمبرجشائر کا شیپی ہل ہے جہاں سال بھر میں صرف 12 مسافر خدمات حاصل کرتے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں

7۔ امریکی ایئرپورٹ پر سیکورٹی سے گزرتے ہوئے پانی لے جانے کی حد مقرر نہیں ہے اگر اس پانی میں زندہ مچھلی ہو۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (بوسٹن گلوب)

8۔ ٹیکس سے قبل کی آمدن کے لحاظ سے نیچے سے نصف کمانے والے امریکی بالغ سنہ 1970 کی دہائی میں کمانے والے نیچے کے نصف بالغ لوگوں سے زیادہ نہیں کماتے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (فائیو تھرٹی ایٹ)

9۔ سنہ 2016 کے دوران برطانیہ میں گوگل پر پوچھے جانے والے سب سے زیادہ سوال 'واٹ' یعنی 'کیا' سے شروع ہوتے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (وائرڈ)

10۔ ایک 66 سالہ البتروس (آبی پرندہ) ابھی بھی زرخیز ہے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (اے جے +)

اسی بارے میں