فیس بک کے حصص کی گراوٹ پر مایوسی

آخری وقت اشاعت:  بدھ 12 ستمبر 2012 ,‭ 09:33 GMT 14:33 PST
مارک زکربرگ

فیس بک نے رواں سال مئی میں اپنے شیئرز بازار حصص میں فروخت کے لیے پیش کیے تھ

فیس بک کے بانی مارک زکربرگ نے پہلی بار بازار حصص میں کمپنی کے شیئرز میں تیزی سے گراوٹ پر مایوسی کا اظہار کیا ہے۔

فیس بک نے رواں سال مئی میں اپنے شیئرز بازار حصص میں فروخت کے لیے پیش کیے تھے اور اب تک ان شیئرز کی مالیت تقریباً پچاس فیصد کم ہو گئی ہے۔

مارک زکربرگ کےمطابق فیس بک اب ڈیسک ٹاپ کمپیوٹرز کی بجائے موبائل فونز کے ذریعے سرمایہ اکٹھا کرے گی۔

امریکی شہر سان فرانسسکو میں ایک کانفرس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ’حقیقت میں آج سے چھ ماہ پہلے تک موبائل فون پر ہمارے پاس ایک بھی اشتہار نہیں تھا۔‘

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ فیس بک دنیا کی مقبول ترین ویب سائٹ ہے اور اس کے صارفین کی تعداد پچانوے کروڑ ہے۔

مارک زکربرگ سے جب پوچھا گیا ہے کہ مارکیٹ میں مسلسل یہ افواہیں ہیں کہ فیس بک موبائل فون متعارف کرا رہی ہے تو اس پر انہوں نے ان قیاس آرائیوں کو مسترد کر دیا۔

مارک زکربرگ کے مطابق’موبائل فون کے صارفین کی تعداد ایک کروڑ یا زیادہ سے زیادہ ایک کروڑ بیس لاکھ تک پہنچ جائے گی، ہمارے لیے موبائل فون ایک غلط حکمت عملی ہوگی۔‘

رواں سال مئی میں فیس بک نے جب اپنے حصص فروخت کے لیے پیش کیے تھے تو ایک حصص کی قمیت اڑتیس ڈالر تھی اور اب یہ انتیس اعشاریہ چار تین ہو چکی ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔