ڈیجیٹل تفریح پر ایک ارب پاؤنڈ کا ریکارڈ خرچ

آخری وقت اشاعت:  بدھ 2 جنوری 2013 ,‭ 04:08 GMT 09:08 PST

آج بھی تفریحی مواد کی سیلز میں تین چوتھائی حصہ ڈسکس کا ہی ہے۔

سنہ دو ہزار بارہ کے دوران دنیا بھر میں موسیقی، فلمیں اور گیمز ڈاؤن لوڈ کرنے پر ایک ارب پاؤنڈ سے زائد خرچ کیے گئے جو کہ ایک ریکارڈ ہے۔

دو ہزارگیارہ کے مقابلے میں دو ہزار بارہ میں ڈیجیٹل ڈاؤن لوڈز میں گیارہ اعشاریہ چار فیصد اضافہ ہوا ہے جس کا مطلب یہ ہے کہ اب دنیا میں تفریحی مارکیٹ میں ڈیجیٹل تفریحات کا حصہ پچیس فیصد تک پہنچ گیا ہے۔

تاہم تفریحی مصنوعات فروخت کرنے والوں کی جانب سے جاری کردہ اعدادوشمار کے مطابق اس عرصے کے دوران سی ڈیز، ڈی وی ڈیز، بلیو رے ڈسکس اور ویڈیوگیمز ڈسکس کی فروخت میں سترہ اعشاریہ چھ فیصد کی کمی دیکھی گئی ہے۔

انٹرٹینمنٹ ریٹیلرز ایسوسی ایشن کے ڈائریکٹر جنرل کم بیلے کا کہنا ہے کہ ایک ارب پاؤنڈ کا ہدف عبور کرنا ریٹیلرز کے لیے ایک ناقابلِ یقین کامیابی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ’اب آپ موسیقی، ویڈیو اور گیمز جب چاہیں اور جہاں چاہیں حاصل کر سکتے ہیں لیکن ساتھ ساتھ لوگ یہ جان کر بھی حیران ہوں گے کہ آج بھی تفریحی مواد کی سیلز میں تین چوتھائی حصہ ڈسکس کا ہی ہے۔‘

دو ہزار بارہ میں ڈیجیٹل سیلز کا نصف حصہ ویڈیو گیمز کا تھا جو آٹھ فیصد کے اضافے کے ساتھ پانچ سو باون ملین پاؤنڈ رہا۔

اس کے علاوہ موسیقی کی فروخت سے حاصل شدہ آمدن پندرہ فیصد اضافے کے ساتھ تین سو تراسی ملین پاؤنڈ اور فلموں یا ویڈیوز کی فروخت سے ملنے والی رقم بیس فیصد اضافے کے ساتھ اٹھانوے ملین پاؤنڈ رہی۔

ٹیکنالوجی کے لیے بی بی سی کے نامہ نگار کا کہنا ہے کہ ’تفریحی صنعت کو ڈیجیٹل دور میں داخل ہونے میں مشکلات کا سامنا ہے۔ اگرچہ اب صارفین ڈاؤن لوڈز کے لیے رقم ادا کر رہے ہیں لیکن اس کے باوجود دکانوں پر ڈسکس کی فروخت میں تیزی سے کمی نہیں آ رہی۔‘

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔