’ٹوئٹر کے ڈھائی لاکھ صارفین کی معلومات چوری‘

آخری وقت اشاعت:  ہفتہ 2 فروری 2013 ,‭ 07:37 GMT 12:37 PST

ٹوئٹر نے چوری سے متاثر ہونے والے صارفین کو ای میل کے ذریعے اطلاع دی ہے

دنیا کی مقبول مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر کا کہنا ہے کہ ہیکرز نے اس کے ڈھائی لاکھ صارفین کی معلومات چوری کی ہیں۔

اس بات کا اعلان کمپنی کے ڈائریکٹر انفارمیشن سکیورٹی باب لارڈ نے اپنے بلاگ میں کیا ہے۔

باب کے مطابق چرائی گئی معلومات میں صارفین کے پاس ورڈز کے علاوہ ان کے یوزر نیم، ای میل کی معلومات اور دیگر ڈیٹا شامل ہیں۔

انہوں نے بتایا ہے کہ اس چوری سے متاثر ہونے والے ٹوئٹر صارفین کو ای میل کے ذریعے اطلاع دے دی گئی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ٹوئٹر کے خلاف ہیکرز کی کارروائی ان کارروائیوں سے ملتی جلتی ہے جن کا سامنا نیویارک ٹائمز سمیت دیگر امریکی میڈیا اور ٹیکنالوجی کمپنیوں کو کرنا پڑا ہے۔

جمعرات کو امریکی اخبار نیویارک ٹائمز نے کہا تھا کہ چین سے تعلق رکھنے والے ہیکرز نے اس کے کمپیوٹر نظام سے چھیڑچھاڑ کی ہے۔

نیویارک ٹائمز کے مطابق گذشتہ چار ماہ سے چین کے بعض ہیکرز کی جانب سے اس کی سائٹ میں مستقل دخل اندازی کی جاتی رہی ہے اور یہ واقعات چینی وزیراعظم وین جیا باؤ کے خاندان کی جانب سے اربوں کی دولت بٹورنے سے متعلق ایک رپورٹ تیار کرنے کے وقت سے ہی ہو رہے ہیں۔

خیال رہے کہ گزشتہ برس نومبر میں بھی ٹوئٹر نے اپنے ہزاروں صارفین کو ای میل کے ذریعے ان کے اکاؤنٹ متاثر ہونے کے بارے میں آگاہ کیا تھا۔

ٹوئٹر کی جانب سے بھیجے جانے والے پیغام میں کہا گیا تھا کہ تیسرے فریق کی جانب سے کچھ اکاؤنٹ متاثر ہوئے ہیں جبکہ صارفین کو ای میل کے ذریعے آگاہ کیا گیا تھا کہ ان کے پاس ورڈ غیر ارادی طور پر تبدیل ہو گئے ہیں۔

اس میں بی بی سی کے ایک اکاؤنٹ سمیت چند ہائی پروفائل اکاؤنٹ بھی شامل تھے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔