مستقبل کا جہاز مضبوط اور ہلکا بھی

جعلی جیسی ساخت والا ہوائی جہاز سفر کرنے کا سب سے اچھا طریقہ تو نہیں لگتا لیکن یہ مستقبل میں سفر کرنے کے منفرد خیالات میں سے ایک ہے۔

سکاٹ لینڈ کے دارالحکومت ایڈنبرا میں ٹیڈگلوبل کانفرنس میں ایئر بس کی طرف سے ڈیزائن کیے گئے ایک ایسے ہی ہوائی جہاز کا ماڈل دکھایا گیا۔

انسان کے ڈھانچے سے متاثر یہ ڈیزائن مضبوط تو ہے ہی بلکہ ہلکا بھی ہے۔

اس کا مطلب یہ ہوا کہ یہ جہاز اڑان کے دوران ایندھن بھی کم استعمال کر سکتا ہے۔

کمپنی کا ہدف جہاز کی تعمیر میں استعمال ہونے والے مخلوط مادہ کو تھريڈي پرنٹ لے کر تیار کرنا ہے.

مستقبل کے جہازوں کو لے کر ایک دوسرا خیال جہاز کی دم کو اوپر کی طرف موڑنے کی ہے جس سے انجن کا شور اوپر کی طرف جائے اور صوتی آلودگی کو کم کیا جا سکے گا۔

جہاز کے اندر ایئر بس کے انجینئرز نے بیٹھنے کے روایتی طریقوں کی بجائے نئے علاقوں کو تیار کیا ہے جن میں ’مورفنگ‘ سیٹس ہوں گی۔ یہ سیٹیں نہ صرف بیٹھنے والوں کی توانائی کو ذخیرہ کر سکیں گی بلکہ مسافر کے جسمانی خدوخال کے مطابق سائز بھی تبدیل کر سکیں گی۔

ٹیم کا مشورہ ہے کہ جہاز کے آگے کی طرف سیٹوں میں ایسے سینسر لگائے جائیں جو مسافروں کی صحت پر بھی نظر رکھ سکیں۔ اس کے علاوہ ایک گیمنگ زون بھی بنایا جا سکتا ہے جس پر مسافر کھیلوں کا لطف اٹھا سکیں۔

تجویز یہ بھی ہے کہ آج کل کے چھوٹے دروازوں کے بجائے مستقبل کے جہازوں میں زیادہ وسیع دروازے ہوں جن سے داخل ہوتے وقت مسافر اپنے ہاتھ کے تھیلے یا ہینڈ لگج وہیں چھوڑ دیں۔

یہ ہینڈ لگج بعد میں ان کی سیٹوں تک پہنچا دیے جائیں گے۔

اسی بارے میں