آئرلینڈ: موسمیاتی عجوبے ’سپرائٹ‘ کا ظہور

شمالی آئرلینڈ کی ایک اوبزویٹری نے ایک نیا موسمیاتی عجوبہ ’سپرائٹ‘ ریکارڈ کیا ہے۔ سپرائٹ نامی موسمیاتی عجوبہ برطانیہ اور آئرلینڈ میں شاذر نادر ہی نظر آتے ہیں۔

شمالی آئرلینڈ کے شہر ارما کے اوپر ظہور ہونے اس موسمیاتی عجوبے کو پچیس اور چھبیس جولائی کی رات آنے والے طوفانِ برق باران کے دوران ریکارڈ کیاگیا۔

ڈبلن میں قائم آوبزویٹری میں ریکارڈ کیا جانے والا سپرائٹ ایک گاجر کی شکل کی ایک چمک ہے جسے ارما کے اوپر دیکھا گیا۔

عام طور پر طوفان میں پھوٹنےوالی برق بادلوں کے درمیان یا پھر بادلوں اور زمین کے درمیان سفر کرتی ہے۔

جبکہ سرخی نما سپرائٹ بادلوں کے اوپر نمودار ہوتا ہے۔ سپرائٹ بہت ہی کم وقت کے لیے نمودار ہوتا ہے اور اسے انسانی آنکھ سے دیکھنا ممکن نہیں اور خصوصی کمیروں کی مدد سے دیکھا جا سکتا ہے۔

سپرائیٹ ایک انتہائی طاقتور موسمیاتی عجوبہ ہوتا ہے اور اسے دور سے دیکھا جا سکتا ہے۔

انیس سو اسی کی دہائی میں انتہائی حساس کیمروں کی مدد سے سپرائٹ ریکارڈ کیا گیا۔ پچیس جولائی کی رات ایک بجے سے تین بجے تک ریکارڈ کیے جانے والی تصاویر میں میں گاجر نما سپرائٹ بھی دیکھنے میں آیا ہے۔

اسی بارے میں