افریقی ہاتھیوں کی بقاء کو خطرہ

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption غیرقانونی شکار کے نتیجے میں افریقی نسل کے ہاتھیوں کو ناپید ہونے کا خطرہ لاحق ہے

ایک رپورٹ کے مطابق افریقی ہاتھیوں کی زندگی خطرے میں ہے کیونکہ گذشتہ سال ایک تخمینے کے مطابق 20،000 سے زیادہ ہاتھی مارے جا چکے ہیں۔

ناپید ہونے کے خطرے سے دوچار جاندار کے متعلق بین الاقوامی ضابطہ کار ادارے سائٹس کے دفتر کا کہنا ہے کہ غیر قانونی طور پر جانوروں کا شکار ان کی پیدائش کی شرح سے زیادہ ہے۔

بہرحال رپورٹ میں یہ بھی کہا گيا ہے کہ گذشتہ دو برسوں کے مقابلے غیرقانونی طور پر جانوروں کے شکار میں قدرے کمی آئی ہے۔

اس میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ اس کے پس پشت قومی سرحدوں سے ماورا منظم جرائم پیشہ شامل ہے۔

جینوا میں قائم ادارہ سائٹس بین الاقوامی سطح پر 35 ہزار سے زیادہ اقسام اور نسلوں کے پودوں اور جانوروں کی تجارت کے ضابطوں کے لیے ذمہ دار ہے۔

بی بی سی ماحولیات کے ہمارے نمائندے میٹ میک گرا کا کہنا ہے کہ تازہ اعداد و شمار میں دلچسپ اشارے ملتے ہیں جس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ سائٹس کے سخت موقف کا نتیجہ سامنے آ رہا ہے۔

پہلی بار ایشیا کے بجائے افریقہ میں ہاتھی دانت کے بڑے مال پکڑے گئے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption ہاتھی دانت کے بنے سامان بین الاقوامی بازورں میں بہت مقبول ہیں

ان کا مزید کہنا ہے کہ کینیا، تنزانیہ اور یوگانڈا میں سخت نگرانی کے نتیجے میں اور چین جیسے اہم بازاروں سے مانگ میں کمی کے باعث ان میں کمی آئی ہے۔

واضح رہے کہ چین میں قانونی ہاتھی دانت کی مانگ میں اضافہ ہو رہا ہے جو کہ روس سے برآمد کیا جاتا ہے۔

سائٹس کے جنرل سیکریٹری جون ای سکینلن نے کہا: ’افریقی ہاتھیوں کے سامنے ان کی بقا کا مسئلہ ہے کیونکہ ان کے دانت کے لیے بڑے پیمانے پر ان کا شکار کیا جا رہا ہے۔‘

رپورٹ میں سنہ 2013 میں 500 کلو گرام سے زیادہ مقدار میں ہاتھی دانت کے سامان پکڑے جانے کے واقعات میں اضافے کا بھی ذکر ہے۔

پہلی بار ایشیا سے زیادہ افریقہ میں غیرقانونی مال پکڑے گئے ہیں جن میں 80 فی صد مال کینیا، تنزانیہ، اور یوگانڈا میں پکڑے گئے۔

ہاتھیوں کے تحفظ کے لیے جدجہد کرنے والوں کا خیال ہے کہ ہاتھی دانت کے غیر قانونی مال کے پکڑے جانے میں اضافہ یہ ظاہر کرتا ہے کہ اس کے متعلق قانون کو نافذ کیا جا رہا ہے اور اس سے یہ بھی پتہ چلتا ہے کہ ہاتھی دانت کی مانگ کتنی زیادہ ہے۔

سائٹس نے غیرقانونی طور پر جانوروں کے مارے جانے کے اعداد و شمار افریقہ میں 51 مقامات سے حاصل کیے جہاں مجموعی طور پر تقریبا 30 سے 40 فی صد ہاتھی پائے جاتے ہیں۔

اسی بارے میں