امریکی فوج کی ویب سائٹ پر ہیکرز کا حملہ

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption امریکی فوج کی ویب سائٹ کو ہیک کرنے کی ذمہ داری شام کے صدر بشار الاسد کے حامی گروہ سیریئن الیکٹرنک آرمی نے قبول کی ہے

امریکی فوج نے اپنی ویب سائٹ ہیک ہونے کے باعث اس کو عارضی طور پر بند کر دیا ہے۔

امریکی فوج کا کہنا ہے کہ ان کی ویب سائٹ thearmy.mil کو ہیک کیا گیا جس کے باعث حفاظتی طور پر اس ویب سائٹ کو بند کردیا گیا ہے۔

امریکی فوج کا کہنا ہے کہ یہ قدم اس لیے لیا گیا ہے کہ ویب شائٹ کو مزید نقصان نہ ہو سکے اور اس میں سے معلومات نہ چرائی جا سکیں۔

امریکی فوج کی ویب سائٹ کو ہیک کرنے کی ذمہ داری شام کے صدر بشار الاسد کے حامی گروہ سیریئن الیکٹرنک آرمی نے قبول کی ہے۔

یاد رہے کہ پچھلے ہفتے امریکہ نے کہا تھا کہ چینی ہیکروں نے وفاقی حکومت کے کمپیوٹرز کو ہیک کرنے کی کوشش کی تھی جس میں 40 لاکھ سرکاری ملازمین کی معلومات کے چوری ہونے کا خدشہ ہے۔

تاہم چین نے اس الزام کی تردید کرتے ہوئے اس کو غیر ذمہ دارانہ قرار دیا تھا۔

امریکی فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے سربراہ بریگیڈیئر جنرل میلکم فروسٹ نے پیر کو کہا ’فوج نے حفاظتی اقدامات کے تحت ویب سائٹ بند کردی تاکہ اس میں سے معلومات چوری نہ کی جاسکیں۔‘

واشنگٹن میں بی بی سی کے نامہ نگار گیری او ڈوناہیو کا کہنا ہے کہ army.mil ویب سائٹ امریکی فوج کی اہم ویب سائٹ ہے اور اس کو بند کرنے میں بڑی شرمندگی ہے۔

یہ واقعہ ایسے وقت پیش آیا ہے جب پانچ ماہ قبل امریکی سینٹرل کمانڈ نے اپنے یو ٹیوب اور ٹویٹر اکاؤنٹس کو عارضی طور پر بند کیا۔ امریکی سینٹرل کمانڈ کا کہنا تھا کہ یہ قدم اس لیے اٹھایا گیا ہے کہ ان اکاؤنٹس کو سائیبر شرانگیزی کا نشانہ بنایا گیا اور ان پر دولت اسلامیہ کے حق میں پیغامات شائع کیے گئے تھے۔

اسی بارے میں