مسلم ڈیٹنگ ویب سائٹ کے ممبران کی معلومات افشا

تصویر کے کاپی رائٹ MUSLIMMATCH.COM

ڈیٹنگ ویب سائٹ ’مسلم میچ‘ پر سائبر حملے کے بعد اس کے ڈیڑھ لاکھ ممبران کی ذاتی تفصیلات انٹرنیٹ پر شائع کر دی گئی ہیں۔

تفصیلات کے علاوہ ممبران کے سات لاکھ سے زیادہ نجی پیغامات بھی افشا کیے گئے ہیں۔

ویب سائٹ کے ہوم پیج پر ایک پیغام میں کہا گیا ہے کہ ’ہمیں سکیورٹی میں مبینہ مداخلت کے بارے میں آگاہ کیا گیا ہے اور ہم اپنے نظام کا جائزہ لے رہے ہیں اور اس مسئلے کا حل تلاش کرنے اور اپنی سکیورٹی کو سخت کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔‘

افشا کی جانے والی معلومات میں حساس معلومات بھی شامل ہیں جیسے کہ وہ فرد ایک سے زیادہ شادی کے بارے میں غور کرے گا یا نہیں یا کہ اسلام اس کا پیدائشی مذہب ہے یا بعد میں قبول کیا گیا ہے۔

مسلم میچ کی ویب سائٹ پر سائبر حملے کا انکشاف سائبر سکیورٹی الرٹ ویب سائٹ چلانے والے ویب سکیورٹی کے محقق ٹرائے ہنٹ نے کیا۔

ٹیکنالوجی نیوز کی ویب سائٹ مدربورڈ کے مطابق افشا کی جانے والی معلومات میں ممبران اور ملازمین کے مقامات، ازدواجی حیثیت، نام، ای میل اور آئی پی پتے بھی شامل ہیں۔

مسلم میچ کے فیس بک صفحے پر ویب سائب کو ’کنوارے، طلاق یافتہ، رنڈوے، بیوہ اور شادی شدہ مسلمانوں کے مل بیٹھنے کا مقام قرار دیا گیا ہے جہاں وہ تبادلۂ خیال کر سکتے ہیں اور اپنا جیون ساتھی تلاش کر سکتے ہیں۔‘

افشا کیے جانے والے ایک پیغام میں کہا گیا ہے کہ’جب آپ مجھ سے بات کریں گی تو لطف اٹھائیں گی۔ میں ایک سچا اور کھرا شخص ہوں جسے ایسی مسلمان خاتون کی سنجیدگی سے تلاش ہے جو ایک دوست بن سکے اور زندگی اور آخرت کا سفر میرا ہاتھ تھام کر سکے۔‘

خیال کیا جا رہا ہے کہ جن افراد کی معلومات افشا ہوئی ہیں ان میں سے بیشتر برطانیہ، امریکہ اور پاکستان کے رہائشی ہیں۔

سائبر حملے کے بعد ویب سائٹ کو عارضی طور پر بند کر دیا گیا ہے اور کمپنی کا کہنا ہے کہ ویب سائٹ رمضان کے اختتام تک بند رہے گی۔

اسی بارے میں