شارجہ ون ڈے: پاکستان نے ویسٹ انڈیز کو 59 رنز سے شکست دے کر سیریز جیت لی

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption بابر اعظم نے اس سیریز میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے

پاکستان نے ویسٹ انڈیز کے خلاف ایک روزہ کرکٹ میچوں کی سیریز کے دوسرے میچ میں مہمان ٹیم کو 59 رنز سے شکست دے کر تین یک روزہ میچوں کی سیریز جیت لی ہے۔

اس سے قبل پاکستان نے ٹی ٹوئنٹی میچوں کی سیریز میں بھی تین صفر سے جیتی ہے۔

شارجہ میں کھیلے جانے والے میچ میں پاکستان نے مقررہ 50 اوورز میں پانچ وکٹوں کے نقصان پر 337 رنز بنائے اور جواب میں ویسٹ انڈیز کی ٹیم سات وکٹوں کے نقصان پر 278 رنز سکور کر سکی۔

پاکستان کو دوسرے ہی اوور میں کامیابی حاصل ہوئی جب محمد عامر نے چارلز کو دو رنز کے انفرادی سکور پر آوٹ کیا۔

ویسٹ انڈیز کی جانب سے کریگ اور براوو نے عمدہ کھیل پیش کیا اور سکور کو 92 تک لے گئے اور دونوں کھلاڑیوں نے جارحانہ کھیل کھیلنا شروع کر دیا تھا۔

تاہم کریگ ایک ناممکن رن لینے کی کوشش میں 39 رنز بنا کر رن آؤٹ ہو گئے۔

ویسٹ انڈیز کی جانب سے براوو 61 رنز بنا کر اور سیمیولز 57 رنز بنا کر نمایاں رہے۔

پاکستان کی جانب سے وہاب نے دو جبکہ عماد وسیم اور محمد عامر نے ایک ایک وکٹ لی۔

اس سے قبل پاکستانی اننگز کی خاص بات بابر اعظم اور شعیب ملک کی شاندار بلے بازی تھی۔

بابر اعظم نے اس سیریز میں لگاتار دوسری سنچری 111 گیندوں پر آٹھ چوکوں کی مدد سے مکمل کی جبکہ شعیب ملک نے 90 رنز بنائے۔

ان کے علاوہ سرفراز احمد نے بھی نصف سنچری بنا کر ٹیم کو ایک اچھے مجموعے تک پہنچنے میں مدد دی۔

اتوار کو شرجیل خان اور اظہر علی نے اننگز شروع کی تو پہلے میچ میں نصف سنچری بنانے والے شرجیل خان نے اپنا جارحانہ انداز برقرار رکھا اور اننگز کے آغاز میں ہی دلکش سٹروک کھیلے۔

ان دونوں نے ٹیم کا سکور 40 رنز تک پہنچایا تو ویسٹ انڈین کپتان جیسن ہولڈر نے اپنے ہم منصب اظہر علی کو ایل بی ڈبلیو کر دیا۔

اظہر نے امپائر کے فیصلے کے خلاف ریویو لیا لیکن تھرڈ امپائر بھی ان کی کوئی مدد نہ کر سکے۔

اس کے بعد بابر اعظم اور شعیب ملک نے تیسری وکٹ کے لیے 169 رنز کی شراکت قائم کی اور پاکستان کو ایک بڑے مجموعے کی جانب گامزن کر دیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بابر اعظم اور شعیب ملک نے تیسری وکٹ کے لیے 169 رنز کی شراکت قائم کی

شعیب ملک 84 گیندوں پر چھ چھکوں اور تین چوکوں کی مدد سے 90 رنز بنانے کے بعد سنیل نرائن کی گیند پر کیچ ہوئے۔

بابر اعظم 123 رنز کی اننگز کھیل کر آؤٹ ہوئے اور پاکستان کی پانچویں وکٹ عماد وسیم کی شکل میں گری جو 11 رنز بنا کر بولڈ ہوئے۔

اس میچ کے لیے ویسٹ انڈین ٹیم میں ایک تبدیلی کی گئی ہے اورگردن میں تکلیف کی وجہ سے یہ میچ نہ کھیلنے والے فاسٹ بولر شینن گیبریئل کی جگہ الزاری جوزف نے لی ہے جن کے کریئر کا یہ پہلا ون ڈے انٹرنیشنل میچ ہے۔

پاکستان نے اس میچ کے لیے وہی ٹیم میدان میں اتارنے کا فیصلہ کیا ہے جس نے پہلے میچ میں ویسٹ انڈیز کو 111 رنز سے شکست دی تھی۔

پہلے میچ میں پہلی ہی گیند پر آؤٹ ہونے والے اظہر اس بار بھی سکور دوہرے ہندسوں تک پہنچانے میں ناکام رہے اور نو رنز ہی بنا سکے۔

اگلے ہی اوور میں اپنا پہلا میچ کھیلنے والے جوزف نے شرجیل خان کو کیچ کروا کے ایک روزہ کرکٹ میں اپنی پہلی وکٹ لی۔ شرجیل نے 12 گیندوں پر 24 رنز کی اننگز کھیلی جس میں ایک چھکا اور تین چوکے شامل تھے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption شرجیل خان نے پہلے میچ کی طرح اس بات بھی پاکستانی ٹیم کو ایک اچھا آغاز فراہم کیا

اس فتح کے نتیجے میں پاکستان کو اس وقت تین میچوں کی سیریز میں ایک صفر سے برتری حاصل ہے۔

پاکستان ویسٹ انڈیز کے خلاف ٹی 20 سیریز پہلے ہی جیت چکا ہے جبکہ ایک روزہ میچوں کے بعد ٹیسٹ سیریز کھیلی جانی ہے۔

پاکستانی ٹیم اظہر علی (کپتان)، شرجیل خان، بابر اعظم، محمد رضوان، شعیب ملک، سرفراز احمد، محمد نواز، عماد وسیم، وہاب ریاض، محمد عامر اور حسن علی پر مشتمل ہے۔

ویسٹ انڈین ٹیم جے چارلس، کے سی برتھ ویٹ، ڈی ایم براوو، ایم این سیموئیل، دنیش رام دین، کیرن پولارڈ، جیسن ہولڈر (کپتان)، سی آر برتھ ویٹ، سنیل نرائن، ایس اے بین اور الزاری جوزف پر مشتمل ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں