ہوبارٹ ٹیسٹ: آسٹریلیا پر شکست کے سائے منڈلانے لگے

کرکٹ تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption پہلی اننگز کی طرح آسٹریلیا کی دوسری اننگز کا آغاز بھی اچھا نہ تھا

آسٹریلیا اور جنوبی افریقہ کے مابین کھیلے جارہے ہوبارٹ ٹیسٹ کے تیسرے روز کھیل کے اختتام تک آسٹریلیا نے اپنی دوسری اننگز میں دو وکٹوں کے نقصان پر 121 رنز بنائے ہیں تاہم اسے اننگز کی شکست کے بچنے کے لیے مزید 120 رنز درکار ہیں۔

تیسرے دن کا کھیل جب خراب روشنی کے باعث ختم کیا گیا تو اس وقت عثمان خواجہ 56 اور سٹیون سمتھ 18 رنز کے ساتھ کریز پر موجود تھے۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

پہلی اننگز کی طرح آسٹریلیا کی دوسری اننگز کا آغاز بھی اچھا نہ تھا اور برنس بغیر کوئی رن بنائے ایبٹ کے گیند پر پویلین لوٹ گئے۔ دوسرے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی وارنر تھے جنھوں نے 45 رنز بنائے، انھیں بھی ایبٹ نے ہی آؤٹ کیا۔

اس سے قبل جنوبی افریقہ کی پوری ٹیم 326 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی تھی اور اس طرح اسے آسٹریلیا کی پہلی اننگز کے سکور 85 کے جواب میں 240 رنز کی بھاری برتری حاصل ہوگئی تھی۔

جنوبی افریقہ کی جانب سے ڈی کاک 106 اور باوما 74 رنز کی ساتھ نمایاں بیٹسمین رہے جبکہ آسٹریلیا کی جانب سے ہیزل ووڈ چھ وکٹوں کے ساتھ کامیاب ترین بولر رہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption دوسری اننگز میں دونوں اوپنرز کو ایبٹ نے آوٹ کیا

اس سے قبل سنیچر کو میچ کے پہلے دن جنوبی افریقہ نے ٹاس جیت کر آسٹریلیا کو پہلے کھیلنے کی دعوت دی تو آسٹریلیا کی پوری ٹیم اپنی پہلی اننگز میں صرف 85 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی تھی۔

جنوبی افریقہ کی جانب سے ورنن فیلینڈر نے 21 رنز دے کر پانچ کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔ ان کے علاوہ کائل ایبٹ نے تین وکٹیں حاصل کیں۔

مہمان ٹیم کو مایاناز بلے باز اے بی ڈیویلیئرز اور ڈیل سٹین کی خدمات حاصل نہ ہوتے ہوئے بھی تین ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں ایک صفر کی برتری پہلے ہی حاصل ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں