وشاکھاپٹنم: انڈیا کے 455 رنز کے بعد انگلش ٹیم مشکلات کا شکار

کرکٹ تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption وراٹ کوہلی نے ذمہ دارانہ اننگز کھیلتے ہوئے اپنی 14ویں ٹیسٹ سنچری سکور کی

وشاکھاپٹنم میں کھیلے جانے والے دوسرے کرکٹ ٹیسٹ میچ کے دوسرے روز انڈیا کے 455 رنز کے جواب میں پہلی اننگز میں انگلینڈ کی ٹیم شدید مشکلات کا شکار ہے۔

جمعے کو جب کھیل ختم ہوا تو انگلینڈ نے پانچ وکٹوں کے نقصان پر 103 رنز بنائے تھے اور اسے فالو آن سے بچنے کے لیے مزید 152 رنز درکار ہیں۔

٭ میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

٭ دوسرے ٹیسٹ میں انڈیا کی اننگز مستحکم

انگلینڈ کو آغاز میں ہی اس وقت نقصان اٹھانا پڑا جب گذشتہ میچ میں سنچری بنانے والے انگلش کپتان کک صرف دو رنز بنانے کے بعد شامی کی گیند بولڈ ہو گئے۔

ٹیسٹ کرکٹ میں نووارد حسیب حمید 13 رنز بنا سکے اور رن آؤٹ ہوئے۔

بعد میں آنے والے بلے بازوں میں سے بھی سوائے جو روٹ کے کوئی بھی جم کر نہ کھیل سکا اور وکٹیں گرنے کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری رہا۔

روٹ نصف سنچری مکمل کرنے کے بعد 53 رنز پر ایشون کی دوسری وکٹ بنے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption ایشون نے جو روٹ کی اہم وکٹ حاصل کی

جب کھیل ختم ہوا تو بین سٹوکس اور جونی بیئرسٹو 12، 12 رنز پر ناٹ آؤٹ تھے۔

انڈیا کی جانب سے پہلی اننگز میں ایشون نے دو جبکہ یادو اور شامی نے ایک ایک وکٹ لی ہے۔

اس سے قبل انڈیا کی پوری ٹیم اپنی پہلی اننگز میں 455 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی۔

دوسرے روز انڈیا کی جانب سے کپتان وراٹ کوہلی اور ایشون نے 317 رنز چار کھلاڑی آؤٹ سے اننگز کا دوبارہ آغاز کیا اور دونوں بلے بازوں نے پانچویں وکٹ کی شراکت میں مزید 35 رنز بنائے۔

اس موقع پر انڈین کپتان وراٹ کوہلی 267 گیندوں پر 18 چوکوں کی مدد سے 167 رنز بنانے کے بعد معین علی کی وکٹ بنے۔

بعد میں ایشون نے جیانت یادوو کے ساتھ مل کر آٹھویں وکٹ کی شراکت میں مزید 64 رنز بنا ڈالے۔

ایشون نے نصف سنچری بنائی اور وہ 58 جبکہ یادوو 35 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption انگلش بلے بازوں میں سے بھی سوائے جو روٹ کے کوئی بھی جم کر نہ کھیل سکا

پہلی اننگز میں انڈیا کی جانب سے کوہلی کے علاوہ چیتیشور پجارا نے بھی سنچری بنائی۔ وہ 119 رنز بنا کر جیمز اینڈرسن کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوئے۔ ان کی اننگز میں دو چھکے اور 12 چوکے شامل ہیں۔

انگلینڈ کی جانب سے معین علی اور جیمز اینڈرسن نے تین، تین جبکہ عادل رشید نے دو، سٹوئرٹ براڈ اور بین سٹوکس نے ایک ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

یاد رہے کہ انڈیا اور انگلینڈ کے درمیان کھیلا گیا پہلا ٹیسٹ میچ بغیر ہار جیت کے فیصلے کے ختم ہو گیا تھا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں