وراٹ کوہلی نے سچن کا ریکارڈ برابر کر دیا

کوہلی اور کیدار جادھو تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption کپتان وراٹ کوہلی اور کیدار جادھو نے عمدہ سنچری بنائی اور ٹیم کی جیت میں کلیدی کردار ادا کیے

انڈیا کی کرکٹ ٹیم نے اتوار کی شب انگلینڈ کے خلاف پہلا ون ڈے میچ تین وکٹوں سے جیت کر تین میچوں کی سیریز میں ایک صفر کی برتری حاصل کر لی ہے۔

اس جیت کے ساتھ ساتھ کپتان وراٹ کوہلی نے انڈیا کے لیجنڈ سچن تنڈولکر کا ایک اور ریکارڈ بھی برابر کر دیا ہے۔

ہدف کے تعاقب میں سب سے زیادہ سنچریاں سکور کرنے کا ریکارڈ سچن تندولکر کے نام تھا لیکن پونے میں کھیلے گئے اس میچ میں کوہلی نے اپنی 17 ویں سنچری سکور کر کے یہ ریکارڈ برابر کر دیا ہے۔

اتنا ہی نہیں وراٹ کی زیادہ تر سنچریوں کی بدولت انڈیا کو جیت ملی ہے۔ کوہلی نے کُل 27 سنچریاں سکور کی ہیں جن میں سے 23 بار ٹیم کو فتح ملی ہے۔

میچ کا سکور کارڈ یہاں دیکھیں

انڈیا نے مہاراشٹر کے شہر پونے میں ٹاس جیت کر انگلینڈ کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی تو انگلینڈ کی ٹیم نے 350 رنز بنا ڈالے۔

انگلینڈ کی جانب سے جو روٹ نے سب سے زیادہ 78 رنز بنائے۔

جواب میں انڈیا نے 350 یا اس سے زیادہ رنز کے ہدف کو تیسری بار کامیابی کے ساتھ حاصل کر لیا۔ انڈیا نے اس سے قبل سنہ 2013 میں آسٹریلیا کے خلاف 360 اور 351 رنز کے ہدف کے تعاقب میں کامیابی حاصل کی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption انگلینڈ کی جانب سے جو روٹ نے سب سے زیادہ رنز بنائے

یہ ایک مشکل ہدف تھا اور جواب میں انڈیا کی اننگز ابتدا میں ہی لڑکھڑاتی نظر آئی۔

لیکن ون ڈے کے لیے نامزد نئے کپتال وراٹ کوہلی اور نوجوان کھلاڑی کیدار جادھو کی سنچری کی بدولت انڈیا نے دلچسپ مقابلے کے بعد جیت حاصل کی۔

ایک وقت پر 63 کے مجموعی سکور پر انڈیا کی چار اہم وکٹیں گر چکی تھیں کے ایل راہل، شکھر دھون، یوراج سنگھ اور مہندر سنگھ دھونی پویلین لوٹ چکے تھے اور شکست کے آثار نمایاں تھے۔

کپتان وراٹ کوہلی نے 105 گیندوں میں 122 رنز بنائے جبکہ کیدار جادھو نے بھی سنچری سکور اور 120 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

انڈیا اور انگلینڈ کے درمیان تین ایک روزہ میچوں کی سیریز کا دوسرا میچ 19 جنوری کو ہوگا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں