سنسنی خیز مقابلے کے بعد انگلینڈ کی پانچ رنز سے جیت

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption انڈیا کو تیسرا نقصان اس وقت اٹھانا پڑا جب ویراٹ کوہلی 55 رنز سکور کر کے آؤٹ ہوئے

انڈیا اور انگلینڈ کے درمیان کولکتہ میں کھیلے جانے والے تیسرے اور آخری ایک روزہ میچ میں انگلینڈ نے سنسنی خیز مقابلے کے بعد انڈیا کو پانچ رنز سے شکست دے دی۔

انڈیا نے ٹاس جیت کر انگلینڈ کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی۔

انگلینڈ نے مقررہ 50 اوورز میں آٹھ وکٹوں کے نقصان پر 321 رنز بنائے۔ سٹوکس نے جارحانہ بیٹنگ کرتے ہوئے 39 گیندوں میں دو چھکوں اور چار چوکوں کی مدد سے 57 رنز سکور کیے اور آؤٹ نہیں ہوئے۔

انڈیا جواب میں نو وکٹوں کے نقصان پر 316 رنز بنا سکا۔

٭ تفصیلی سکور کارڈ

میچ کی اہم بات جادیو اور پانڈیا کی 104 رنز کی شراکت تھی جس کی بدولت انڈیا واپس میچ میں آیا۔

انڈیا کو آخری اوور میں 16 رنز درکار تھے اور انڈیا کی امیدیں جادیو سے جڑی تھیں۔ جادیو نے آخری اوور کی پہلی دو گیندوں پر چھکا اور چوکا تو مار لیا لیکن اس کے بعد بیٹ تبدیل کرتے ہی وہ آؤٹ ہو گئے۔ انھوں نے 75 گیندوں میں 90 رنز بنائے۔

انڈیا کا آغاز اچھا نہ تھا اور اس کی دو وکٹیں جلدی گر گئیں۔ رہانے ایک رن اور راہول 11 رنز کے انفرادی سکور پر آؤٹ ہوگئے۔ انڈیا کی دو وکٹیں 37 کے مجموعی سکور پر گریں۔

انڈیا کو تیسرا نقصان اس وقت اٹھانا پڑا جب ویراٹ کوہلی 55 رنز سکور کر کے آؤٹ ہوئے۔ انڈیا کو جلد ہی ایک اور نقصان اٹھانا پڑا جب یوراج سنگھ 45 رنز سکور کر کے آؤٹ ہو گئے۔

انگلینڈ کو پانچویں کامیابی دھونی کی وکٹ کی صورت میں ملی جب وہ 25 رنز بنا کر کیچ آؤٹ ہوئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption رہانے ایک رن بنا کر وائلی کی گیند پر بولڈ ہوئے

دھونی کے آؤٹ ہونے کے بعد انڈیا کے جیت کے امکانات کم ہو گئے تھے لیکن جادیو اور پانڈیا نے مل کر 104 رنز کی شراکت کی۔ پانڈیا نے 43 گیندوں میں 56 رنز سکور کیے اور ان کو سٹوکس نے بولڈ کیا۔

انڈیا کے آؤٹ ہونے والے ساتویں کھلاڑی جدیجا تھے جو صرف 10 رنز سکور کر سکے۔ انگلینڈ کو ایک اور کامیابی اس وقت حاصل ہوئی جب ایشون ایک رن بنا کر آؤٹ ہوئے۔

اس سے قبل انگلینڈ کا آغاز اچھا تھا اور جیسن روئے اور بلنگز نے پہلی وکٹ کی شراکت میں 98 رنز سکور کیے۔ یہ شراکت جڈیجا نے توڑی جب انھوں نے بلنگز کو 35 کے انفرادی سکور پر آؤٹ کیا۔

انگلینڈ کو جلد ہی دوسرا نقصان اٹھانا پڑا جب جدیجا نے روئے کو کلین بولڈ کیا۔ روئے نے 56 گیندوں میں 65 رنز سکور کیے۔

بیرسٹو اور مورگن نے تیسری وکٹ کی شراکت میں 84 رنز سکور کیے۔ اس شراکت کو پانڈیا نے توڑا جب انھوں نے مورگن کو 43 رنز کے انفرادی سکور پر آؤٹ کیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption انگلینڈ کا آغاز اچھا تھا اور روئے اور بلنگز نے پہلی وکٹ کی شراکت میں 98 رنز سکور کیے

انگلینڈ کی چوتھی وکٹ اس وقت گری جب پانڈیا کی گیند پر بٹلر صرف 11 رنز بنا کر کیچ آؤٹ ہوئے۔

پانچویں آؤٹ ہونے والے کھلاڑی بیرسٹو تھے جنھوں نے 64 گیندوں میں 56 رنز سکور کیے۔ ان کو بھی پانڈیا نے آؤٹ کیا۔

معین علی صرف دو رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

انگلینڈ کی ساتویں وکٹ اس وقت گری جب ووکس 34 رنز پر آؤٹ ہوئے۔ انھوں نے چار چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 19 گیندوں میں 34 رنز سکور کیے۔

انگلینڈ کے آؤٹ ہونے والے آٹھویں کھلاڑی پلنکٹ تھے جو صرف ایک رن بنا کر رن آؤٹ ہوئے۔

یاد رہے کہ پہلے دو ایک روزہ میچ انڈیا نے جیتے ہیں۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں