کپتان اظہر علی پر سلو اوور ریٹ کے باعث ایک میچ کی پابندی اور جرمانہ

کرکٹ تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption پاکستان کی ایک روزہ ٹیم کے کپتان اظہر علی پر ایک میچ کی پابندی

پاکستان کرکٹ ٹیم کے ایک روزہ میچوں کے کپتان اظہر علی پرانٹر نیشنل کرکٹ کونسل نے سلو اوور ریٹ کی وجہ سے ایک میچ کی پابندی عائد کر دی ہے اور میچ فیس کا 40 فیصد حصہ بطور جرمانہ لگا دیا ہے۔

آئی سی سی نے اظہر علی پر پابندی اور جرمانہ آسٹریلیا کے خلاف ایڈیلیڈ میں کھیلے گئے پانچویں ایک روزہ میچ کے بعد عائد کیا۔ آسٹریلیا نے باآسانی یہ میچ 57 رنز سے جیت کر سیریز چار ایک سے جیت لی ہے۔

’مگر ہمیں کپتان بدلنا ہے‘

پاکستان کے بقیہ کھلاڑیوں پر سلو اوور ریٹ کے باعث میچ فیس کا 20 فیصد جرمانہ لگایا گیا ہے۔

آئی سی سی کے میچ ریفری جیف کرو نے اظہر علی پر یہ پابندی مقررہ وقت میں دو اوور کم کرانے کی پاداش میں لگائی۔

آئی سی سی کے ضوابط کے مطابق اظہر علی نے بارہ مہینے کے دورانیے میں دوسری دفعہ اس جرم کا ارتکاب کیا ہے جس کے باعث ان پر پابندی لگائی گئی ہے۔ اس سے پہلے اظہر علی نے جنوری میں نیوزی لینڈ کے خلاف ایک روزہ میچ میں مقررہ وقت میں اوورز مکمل نہیں کر سکے تھے۔

پاکستان اپنا اگلا ایک روزہ میچ ویسٹ انڈیز کے خلاف اپریل میں کھیلے گا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں