پاکستانی کرکٹ کی بہتری کے لیے کانفرنس کا منصوبہ منسوخ

پی سی بی
Image caption پی سی بی کے مطابق گول میز کانفرنس کی جگہ اب پی سی بی کے چیئرمین سابق کرکٹرز کے ساتھ ورکنگ گروپ سیشنز میں شرکت کریں گے

پاکستان کرکٹ بورڈ نے ملک میں کرکٹ کی بہتری کے لیے مارچ 2017 میں بلائی جانے والی سابق کھلاڑیوں کی گول میز کانفرنس منسوخ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

پی سی بی کی جانب سے بدھ کو لاہور میں جاری کیے جانے والے بیان کے مطابق یہ فیصلہ پاکستانی کرکٹ میں پیش آنے والے حالیہ واقعات کے تناظر میں کیا گیا ہے۔

فوج پی ایس ایل فائنل کے لاہور میں انعقاد میں مکمل تعاون کرے گی: جنرل باجوہ

پی ایس ایل میچ فکسنگ، برطانیہ میں بھی دو افراد گرفتار

پاکستان سپر لیگ سکینڈل، ناصر جمشید بھی معطل

پی ایس ایل: عرفان کے خلاف تحقیقات جاری، شرجیل اور خالد کو شوکاز نوٹس

خیال رہے کہ پاکستانی کرکٹ کو آج کل ایک بار پھر ’فکسنگ سکینڈل‘ کا سامنا ہے۔

یہ سکینڈل متحدہ عرب امارات میں پاکستان سپر لیگ کے دوسرے ایڈیشن کے آغاز کے دوسرے ہی دن سامنے آیا تھا جب اسلام آباد یونائیٹڈ کے دو کھلاڑیوں شرجیل خان اور خالد لطیف کو معطل کر کے واپس پاکستان بھیج دیا گیا تھا۔

پی سی بی کے مطابق ان دونوں کھلاڑیوں کے خلاف یہ کارروائی ایک بین الاقوامی سنڈیکیٹ سے مبینہ طور پر ان کے رابطے کے بعد عمل میں آئی تھی جو پاکستان سپر لیگ کو متاثر کرنے کی کوشش کر رہا تھا۔

ان کی معطلی کے بعد پی سی بی نے ایک اور پاکستانی کرکٹر ناصر جمشید کو بھی انسدادِ بدعنوانی کے ضابطۂ اخلاق کی خلاف ورزی پر معطل کر کے تمام فارمیٹس کی کرکٹ میں حصہ لینے سے روک دیا تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption ناصر جمشید کو انسدادِ بدعنوانی کے ضابطۂ اخلاق کی خلاف ورزی پر معطل کر کے ان کے تمام فارمیٹس کی کرکٹ میں حصہ لینے پر پابندی لگائی گئی ہے

بی بی سی کو معلوم ہوا ہے کہ ناصر جمشید ان دو افراد میں شامل تھے جنھیں برطانیہ کی نیشنل کرائم ایجنسی نے 13 فروری کو عالمی کرکٹ میں میچ اور سپاٹ فکسنگ کے معاملے میں جاری تحقیقات کے تناظر میں گرفتار کرنے کے بعد ضمانت پر رہا کیا ہے۔

پی سی بی کے بیان کے مطابق گول میز کانفرنس کی جگہ اب پی سی بی کے چیئرمین سابق کرکٹرز کے ساتھ ورکنگ گروپ سیشنز میں شرکت کریں گے جو کہ اسلام آباد، لاہور اور کراچی میں منعقد کیے جائیں گے۔

پی سی بی کا کہنا ہے کہ ان سیشنز کا مقصد ملک میں کرکٹ کے ڈھانچے کے بارے میں سابق کھلاڑیوں کے خیالات سے آگاہی حاصل کرنا اور ان کے مشورے لینا ہو گا۔

اسی بارے میں