کولمبو ٹیسٹ: سری لنکا کے خلاف بنگلہ دیش کی 100ویں ٹیسٹ میں یادگار فتح

مشفق الرحیم تصویر کے کاپی رائٹ AFP/Getty Images
Image caption بنگہ دیش نے 100 ٹیسٹ میچ میں کامیابی حاصل کی

سری لنکا اور بنگالہ دیش کے درمیان کولمبو میں کھیلے جانے والے سیریز کے دوسرے اور آخری میچ میں مہمان ٹیم نے سری لنکا کو چاروکٹوں سے شکست دے کر دو ٹیسٹ میچوں سیریز ایک ایک سے برابر کر دی ہے۔

خیال رہے کہ یہ بنگلہ دیش کا 100 واں ٹیسٹ میچ تھا اور انھوں نے جیت کے ساتھ اسے یادگار بنا دیا۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

بنگلہ دیش کی فتح میں آل راؤنڈر شکیب الحسن اور اوپنر تمیم اقبال نے کلیدی کردار ادا کیے۔

تمیم اقبال کو دوسری اننگز میں ان کی عمدہ اننگز کے لیے مین آف دا میچ قرار دیا گیا جبکہ مین آف دا سیریز کا اعزاز شکیب الحسن کو ملا۔

میچ کے پانچویں روز میزبان سری لنکا کا ٹیم 338 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی اور بنگلہ دیش کو جیت کے لیے 191 رنز کا ہدف دیا جسے انھوں نے چھ وکٹوں کے نقصان پر باآسانی حاصل کر لیا۔

اوپنر تمیم اقبال نے 82 رنز کی عمدہ اننگز کھیلی جبکہ شبیر رحمان نے 41 رنز بنائے۔

سری لنکا کی جانب سے رنگنا ہیراتھ اور دلروون پریرا نے تین تین وکٹیں حاصل کیں۔

میچ کے بعد بنگلہ دیش کے کپتان مشفق الرحیم نے کہا کہ ’جیت کا احساس عظیم ہے۔ مستفیض اور شکیب نے فلیٹ وکٹ پر عمدہ بولنگ کی اور سری لنکا پر دباؤ قائم رکھا۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP/Getty Images
Image caption بنگلہ دیش کی جانب سے مہدی حسن نے جیت کے رنز حاصل کیے اور ٹیم خوشی میں جھوم اٹھی

اس سے قبل سری لنکا نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا اور انھوں نے اپنی پہلی اننگز میں دنیش چندی مل کی سنچری (138) کی بدولت 338 رنز بنائے۔

جواب میں بنگلہ دیش نے بہتر آغاز کیا اور ان کی پہلی وکٹ 95 رنز پر گری جبکہ آل راؤنڈر شکیب الحسن نے سنچری (116) بنا کر ٹیم کو 129 رنز کی اہم سبقت دلائی۔ بنگلہ دیش کی ٹیم نے مجموعی طور پر 467 رنز بنائے۔

دوسری اننگز میں سری لنکا نے اوپنر کرونارتنے کی عمدہ سنچری اور بولر پریرا کی نصف سنچری کی بدولت مجموعی طور پر 319 رنز بنانے میں کامیاب رہی۔ شکیب الحسن نے چار وکٹیں حاصل کیں جبکہ مستفیض الرحمان کے حصے میں تین وکٹیں آئیں۔

اس سے قبل گالے میں کھیلے جانے والے میچ میں سری لنکا نے 259 رنز سے جیت حاصل کی تھی۔

اب دونوں ٹیموں کے درمیان چار ون ڈے انٹرنیشنل کی سیریز کا پہلا میچ 25 مارچ کو ڈمبولا میں کھیلا جائے گا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں