انڈیا نے آسٹریلیا سے ميچ اور سیریز دونوں جیت لیں

رویندر جڈیجہ تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption رویندر جڈیجہ کو میچ میں آل راؤنڈ کارکردگی کے لیے مین آف دا میچ اور بہترین بولنگ کے لیے مین آف دا سیریز قرار دیا گیا ہے

انڈیا کے شمالی شہر دھرمشالہ میں چوتھے کرکٹ ٹیسٹ میچ کے چوتھے دن انڈیا نے آسٹریلیا کو آٹھ وکٹوں سے شکست دے کر دو ایک کے فرق سے ٹیسٹ سیریز جیت لی ہے۔

کھیل کے تیسرے روز آسٹریلیا کی ٹیم کی دوسری اننگز میں صرف 137 رنز پر سمٹ گئی تھی اور انڈیا کو جیت کے لیے 106 رنز کا آسان ہدف ملا جسے انھوں نے دو وکٹوں کے نقصان پر حاصل کر لیا۔

آسٹریلیا نے اپنی پہلی اننگز میں 300 رنز بنائے تھے، جس کے جواب میں بھارت نے 332 رنز بنا کر 32 رنز کی برتری حاصل کی تھی۔

اس میچ میں کپتان وراٹ کوہلی کی جگہ اجنکیا رہانے کو کپتانی کی ذمہ داری سونپی گئی ہے کیونکہ کوہلی چوٹ کے سبب میچ سے باہر ہوگئے تھے۔

رویندر جڈیجہ کو اس میچ میں اچھی بیٹنگ اور بولنگ کے لیے مین آف دا میچ قرار دیا گیا جبکہ سیریز میں مجموعی طور پر عمدہ بولنگ کرنے پر وہ مین آف دا سیریز بھی قرار پائے۔

آسٹریلیا کی جانب سے سیریز میں کپتان سٹیون سمتھ نے عمدہ بیٹنگ کی اور تین سنچریاں سکور کیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption سمتھ نے رواں سیریز میں تین سنچریاں سکور کیں

سنیچر کو شروع ہونے والے چوتھے ٹیسٹ میچ میں آسٹریلیا نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا اور ابتدا میں ہی میٹ رین شا ایک رن بنا کر آؤٹ ہو گئے لیکن اس کے بعد ٹیم کپتان سٹیون سمتھ کی سنچری اور ڈیوڈ وانر کی نصف سنچری کی بدولت 300 رنز بنانے میں کامیاب ہوئی۔

انڈیا کی جانب سے نئے کھلاڑی کلدیپ یادو نے سب سے زیادہ چار وکٹیں حاصل کیں۔

انڈیا کی جانب سے لوکیش راہل، چیتیشور پجارا اور رویندر جڈیجہ کی نصف سنچریاں سکور کیں اور انڈیا کو 32 رنز کی اہم سبقت دلائی اور پھر امیش یادو، جڈیجہ اور ایشون کی عمدہ بولنگ کے سامنے آسٹریلیا بے بس نظر آئی۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں