کون ہوگا آئی پی ایل 2017 کا فاتح، ممبئی یا پونے؟

روہت شرما سٹیون سمتھ تصویر کے کاپی رائٹ TWITTER/MUMBAI INDIANS
Image caption فائنل مقابلہ حیدر آباد میں مقامی وقت کے مطابق رات آٹھ بجے شروع ہوگا

انڈین پریمیئر لیگ 2017 (آئی پی ایل) کا فائنل اتوار کو ممبئی انڈینز اور رائزنگ پونے سپر جاینٹس کے درمیان حیدرآباد میں کھیلا جائے گا۔

ممبئی انڈینز اس سے پہلے دو مرتبہ آئی پی ایل جیت چکی ہے جبکہ پونے کی ٹیم پہلی بار ٹرافی کو حاصل کرنے کے لیے میدان میں اترے گی۔

انڈیا کے سابق کپتان اور آئی پی ایل کے تجربہ کار کھلاڑی مہندر سنگھ دھونی کی موجودگی پونے کی ٹیم کے حامیوں کا حوصلہ بڑھا رہی ہے۔

دھونی آئی پی ایل کے 10 سیزن میں ساتویں بار فائنل کھیلنے اتریں گے۔ وہ دو بار چینی سپر کنگز کے لیے ٹرافی بھی جیت چکے ہیں۔

سابق انڈین کرکٹر روی شاستری نے ٹوئٹر پر لکھا: آئی پی ایل کی ایک دہائی (کی تاریخ) میں سات فائنل۔ یہ ہے سٹائل کے ساتھ فننش کرنا۔ آئی پی ایل کے سب سے بڑے باس ایم ایس دھونی ہیں۔

دھونی نے اپنی کپتانی میں سنہ 2010 اور 2011 میں چینئی سپر کنگس کو ٹرافی دلائی تھی۔ سنہ 2010 میں انھوں نے یہ کامیابی ممبئی انڈینز کے خلاف ہی حاصل کی تھی۔

ممبئی کے خلاف پلے آف سٹیج میں دھونی کی کارکردگی بھی شاندار رہی ہے۔ انھوں نے ناک آؤٹ میچوں میں ممبئی کے خلاف 64.66 کی اوسط سے رنز بنائے ہیں۔

ممبئی کے خلاف کوالیفائنگ مقابلے میں دھونی نے پانچ چھکوں کی مدد سے 40 رنز بنا کر جیت کی بنیاد رکھی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Twitter
Image caption انڈیا کے سابھ کھلاڑی روی شاستری نے دھونی کی تعریف کی ہے

روندر جڈیجہ کے نام والے ایک نقلی اکاؤنٹ کے ایک ٹویٹ میں آئی پی ایل میں دھونی کی موجودگی کو بیان کرتے ہوئے لکھا: 'آئی پی ایل ایک ایسا ٹورنامنٹ ہے جہاں ٹیمیں ایم ایس دھونی سے فائنل میں مقابلہ کے لیے اترتی ہیں۔

اگرچہ، پونے صرف دھونی کے ہی بھروسے نہیں ہے۔ کپتان سٹیو سمتھ ٹورنامنٹ میں ٹیم کے سب سے کامیاب بلے باز ہیں۔ راہل ترپاٹھی اور منوج تیواری کے بیٹ سے بھی رنز نکلتے رہے ہیں جبکہ اجنکیا رہانے بھی رنگ میں آ چکے ہیں۔

بولنگ میں جے دیو اناڈكٹ مخالف بلے بازوں کے لیے مصیبت بنے ہوئے ہیں۔

موجودہ سیزن میں دونوں ٹیموں کے درمیان تین بار مقابلہ ہوا ہے اور ہر بار پونے نے ممبئی انڈینز پر جیت درج کی ہے۔

لیکن، ممبئی کے حامیوں کو یقین ہے کہ فائنل میں نتیجہ تبدیل ہو سکتا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Twitter
Image caption دھونی کے پاس آئی پی ایل کے فائنلز کا سب سے زیادہ تجربہ ہے

ترون نامی ایک ٹویٹر صارف نے امید ظاہر کی ہے کہ ممبئی کی ٹیم فائنل میں گذشتہ تین میچوں کا بدلہ لے سکتی ہے۔

کولکتہ نائٹ رائڈرز کے خلاف ممبئی کے بولروں کرن شرما اور جسپريت بمرا کا مظاہرہ اس امید کی بڑی وجہ نظر آتا ہے۔

ممبئی انڈیئنز کے لیے ان کی بیٹنگ کمزور ہے۔ ممبئی انڈیئنز کے کپتان روہت شرما اور ویسٹ انڈیز کے آل راؤنڈر کیرون پولارڈ نے رواں سیزن میں اپنی بیٹنگ کا جوہر نہیں دکھایا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ IPL/TWITTER
Image caption فائنل سے پہلے پریس کانفرینس میں دونوں ٹیم کے کپتان کو دیکھا جا سکتا ہے

پارتھیو پٹیل ٹیم کے سب سے کامیاب بلے باز ہیں لیکن پونے کے خلاف کوالیفائر مقابلے کا نتیجہ بتاتا ہے کہ صرف ان کے بھروسے ممبئی ٹیم جیت کی امید نہیں کر سکتی ہے۔

سٹیون سمتھ نے کہا کہ فائنل تک اس ٹیم کی قیادت کرنا شاندار رہا۔ مجھے سٹیون فلیمنگ اور دھونی کے ساتھ مل کام کرنے میں بہت خوشی ملی۔

جبکہ روہت شرما نے فائنل تک پہنچنے کا سہرا ٹیم ورک کو دیا ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں