ممبئی انڈینز تیسری بار آئی پی ایل کا فاتح

ممبئی انڈیئنز تصویر کے کاپی رائٹ MUMBAI INDIANS
Image caption آئی پی ایل سیزن دس کی فاتح ممبئی انڈیئنز کی ٹیم

انڈیا کے شہر حیدرآباد میں کھیلے جانے والے فائنل میں ممبئی انڈینز نے آئی پی ایل 10 کی ٹرافی جیت کر سب سے زیادہ تین بار چیمپیئن بننے کا ریکارڈ قائم کیا ہے۔

اس سے قبل کولکتہ نائٹ رائیڈرز اور چنئی سپر کنگز دو دو بار یہ ٹرافی جيت چکی ہے۔

اتوار کو کھیلے گئے انتہائی دلچسپ فائنل مقابلے میں ممبئی نے رائزنگ پونے سپرجائنٹس کو ایک رن سے شکست دی۔

٭ کون ہوگا آئی پی ایل 2017 کا فاتح، ممبئی یا پونے؟

٭ سٹوکس آئی پی ایل کے سب سے مہنگے غیرملکی کھلاڑی

فائنل مقابلے میں 19 اوورز تک پونے ٹیم کا دبدبہ قائم تھا لیکن آخری اوور میں آسٹریلیا کے فاسٹ بولر مچل جانسن نے میچ کا رخ تبدیل کر دیا۔

جانسن نے 20 ویں اوور میں شاندار بولنگ کرتے ہوئے اپنی ٹیم کو جیت سے ہمکنار کیا۔

پونے کو آخری اوور میں 11 رنز بنانے تھے لیکن مچل جانسن کے اس اوور میں پونے کے بلے باز صرف نو رن ہی بنا سکے۔

اوور کی پہلی گیند پر منوج تیواری نے چار رنز حاصل کیے جبکہ دوسری گیند پر وہ آؤٹ ہو گئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ TWITTER/MUMABI INDIANS
Image caption جیت کے بعد مچل جانسن کے تاثرات اس طرح تھے

تیسری گیند پر کپتان سٹیون سمتھ آؤٹ ہو گئے۔ انھوں نے 51 رنز بنائے۔ چوتھی گیند پر ایک رن بنا۔ پانچویں گیند پر دو رنز بنے اور آخری گیند پر چوکا لگانے کی ضرورت آن پڑی ڈینیئل كرشچیئن دو رن ہی بنا سکے۔

آخری اوور میں دو وکٹ لے کر صرف نو رن دینے والے جانسن نے چار اوورز میں کل 26 رنز دیے اور تین وکٹیں حاصل کیں۔

اس سے قبل ممبئی انڈینز کے کپتان روہت شرما نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا لیکن ممبئی انڈینز کا آغاز اچھا نہیں رہا۔

کپتان روہت شرما نے ٹیم کو سنبھالا دینے کی کوشش کی لیکن وہ بھی آؤٹ ہو گئے پھر کرونل پانڈیا کے 47 رنز کی بدولت ممبئی انڈینز کسی طرح 20 اوورز میں 129 رنز بنانے میں کامیاب ہوئي اور پونے کو جیت کے لیے 130 رنز کا ہدف ملا جو کہ آئی پی ایل میں کوئی مشکل ہدف نہیں تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ TWITTER/MUMBAI INDIANS
Image caption کرونل پانڈیا کو ان کی بہترین کارکردگی کے لیے مین آف دا میچ قرار دیا گیا

لیکن ممبئی کے بولرز نے نپی تلی بولنگ کی اور پونے کے کھلاڑیوں کو کھل کر رنز بنانے کی اجازت نہیں دی۔ آخری تین اوورز میں جب 30 رنز درکار تھے تو ممبئی کو جیت کی ہلکی سی جھلک نظر آ رہی تھی۔ لیکن پونے کی جانب سے پچ پر مہندر سنگھ دھونی اور کپتان سٹیون سمتھ تھے اس لیے کسی کو یہ گمان نہیں تھا کہ وہ یہ رنز حاصل نہیں کر پائیں گے۔

ممبئی انڈینز کے کھلاڑی کرونل پانڈیا کو 38 گیندوں میں 47 رنز بنانے کے لیے مین آف دا میچ قرار دیا گيا۔ انھوں نے اپنی اننگز میں تین چوکے اور دو چھکے لگائے۔

تصویر کے کاپی رائٹ WITTER/RISING PUNE SUPERGIANTS
Image caption دھونی اور سمتھ نے اچھی کرکٹ کھیلی لیکن ایک رن سے تاریخ رقم کرنے میں ناکام رہے

پونے کے لیے جے دیو اناڈکٹ، زیمپا اور ڈین کرشچين نے دو دو وکٹیں حاصل کیں۔ موجودہ سیزن میں پونے نے ممبئی کو ليگ میں دو بار اور پلے آف میں ایک بار شکست دی تھی۔

دسویں سیزن میں سب سے زیادہ رنز سنرائزرس حیدرآباد کے کپتان ڈیوڈ وارنر نے بنائے۔ انھوں نے 14 میچون میں تین بار ناٹ آؤٹ رہتے ہوئے 641 رنز بنائے جس میں ایک سنچری اور چار نصف سنچریاں شامل تھیں۔

بولنگ میں سب سے زیادہ وکٹیں بھی سنرائزرس کے کھلاڑی کے حصے میں آئیں۔ بھونیشور کمار نے مجموعی طور پر 26 وکٹیں حاصل کیں۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں