چیمپیئنز ٹرافی 2017 میں نئی ٹیکنالوجیز کا استعمال

ڈرون تصویر کے کاپی رائٹ ICC

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل نے انگلینڈ میں آج سے شروع ہونے والی چیمپیئنز ٹرافی میں کئی جدید ٹیکنالوجیز متعارف کرائی ہیں جو کہ شائقین، کھلاڑیوں، میڈیا اور براڈ کاسٹرز کو ذہن میں رکھتے ہوئے متعارف کرائی گئی ہیں۔

ان جدید ٹیکنالوجیز میں ڈرون کا استعمال ہے جو پچ کا تجزیہ دے گا، بیٹ میں انٹیل کا سینسر جو بیٹ سوئنگ کا تجزیہ کرے گا اور سٹیڈیم میں موجود شائقین کے لیے ورچوئل ریئلٹی شامل ہیں۔

آئی سی سی کے چیف ایگزیکٹیو ڈیوڈ رچرڈسن نے کہا کہ چیمپیئنز ٹرافی میں پہلی بار انٹیل کے فیلکن ایٹ کا استعمال کیا جائے گا جس کے ذریعے ہر میچ سے قبل پچ کا تجزیہ کیا جائے گا۔

چیمپیئنز ٹرافی میں نئی ٹیکنالوجی

  • پچ ڈرون فیلکن ایٹ سے لی گئی تصاویر سے پچ کی حالت کے بارے میں جانا جائے گا

  • بلے میں سینسر انٹیل کا سینسر جو بیٹ سوئنگ کا تجزیہ کرے گا

  • ورچوئل ریئلٹی شائقین ہیڈ ماؤئنٹڈ ڈسپلے کے ذریعے ورچوئل بولر کا سامنا کر سکیں گے

Intel

ڈرون سے لی گئی تصاویر سے پچ کی کنڈیشن کے بارے میں جانا جائے گا جیسے کہ پچ پر گھاس کتنی ہے۔

نئے بیٹ سینسر کے حوالے سے آئی سی سی کے چیف ایگزیکٹیو نے بتایا کہ انٹیل ٹیکنالوجی کے سینسر کسی بھی بیٹ پر لگائے جا سکتے ہیں جس سے بیٹسمین کے سٹروک کے بارے میں معلومات حاصل کی جا سکیں گی۔

انٹیل تصویر کے کاپی رائٹ Intel

اس سینسر سے ہر سٹروک پر بیٹ کا بیک لفٹ، فولو تھرو کے بارے میں معلومات حاصل کی جائیں گی۔ کئی بیٹسمین اس سینسر کا استعمال کریں گے جس کے ذریعے سٹروک کے بارے میں مفید معلومات ملیں گی۔ ان سینسرز سے ملنے والی معلومات مداحوں کے لیے بھی میسر ہوں گی تاکہ وہ اپنا تجزیہ کر سکیں۔

سٹیڈیم میں موجود شائقین کے لیے انٹیل اوول اور ایجبیسٹن میں ورچوئل ریئلٹی متعارف کر رہی ہے۔ سٹیڈیم میں موجود شائقین ہیڈ ماؤئنٹڈ ڈسپلے کے ذریعے ورچوئل بولر کے خلاف اپنی بیٹنگ کی صلاحیت ٹیسٹ کر سکیں گے۔

-

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں