کوہلی کی وکٹ لینا چاہتا تھا لیکن عامر نے یہ خواہش پوری نہیں ہونے دی: شاداب

شاداب تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption شاداب کے 23ویں اوور میں شائقین کو لگا رہا تھا کہ میچ پاکستان کے ہاتھ سے نکل رہا ہے۔

پاکستان کے نوجوان سپنر شاداب انڈیا کے خلاف آئی سی سی چیمپیئنز ٹرافی کے فائنل میں ویراٹ کوہلی کی وکٹ لینا چاہتے تھے لیکن محمد عامر نے ان کی یہ خواہش پوری نہیں ہونے دی۔

میچ کے بعد بی بی سی سے بات کرتے ہوئے شاداب نے کہا کہ پانڈیا جب ان کو چھکے لگا رہے تھے تو ان کو کوئی پریشانی نہیں ہوئی تھی۔

شاداب کو میچ کے 23 ویں اوور میں 23 رن پڑے تھے جن میں لگاتار تین چھکے شامل تھے۔ اس موقع شائقین کو لگا رہا تھا کہ میچ پاکستان کے ہاتھ سے نکل رہا ہے۔

پاکستان کرکٹ کے چیمپیئنز کا چیمپیئن

پاکستان کی انڈیا کو 180 رنز سے شکست

’کیونکہ سرفراز کو یقین تھا‘

کوئی جھوم اٹھا اور کوئی غم سے نڈھال

شاداب کا کہنا تھا کہ گراؤنڈ کے اندر ان کے ذہن میں کوئی شک نہیں تھا۔ انھوں نے کہا کہ اس وقت چھ وکٹیں گر چکی تھیں اور ٹیم کی یہی کوشش تھی کہ کسی طرح ایک اور وکٹ حاصل کی جائے۔

انھوں نے کہا کہ انھوں نے جان بوجھ ایک ہی جگہ تیں چار گیندیں پھینکیں اور وہ چاہتے تھے کہ پانڈیا کوئی بال کو تو 'مس ٹائم' کرے گا۔

ایک سوال کے جواب میں کہ کیا انھوں نے ٹیم میں اپنی جگہ مستحکم کر لی ہے تو انھوں نے کہا کہ وہ کبھی اپنی ذات کے لیے نہیں کھیلتے۔

انھوں نے کہا کہ وہ ہمیشہ ٹیم کے لیے کھیلتے ہیں اور کوشش کرتے ہیں کہ سو فیصد کارکردگی دکھا سکیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption اظہر نے کہا کہ بعض اوقات پاکستان میں تنقید حد سے زیادہ بڑھ جاتی ہے جس پر تکلیف ہوتی ہے

اظہر علی نے اسی بات چیت کے دوران کہا کہ وہ نہیں سمجھتے کہ انھوں نے ان پر تنقید کرنے والوں کو اپنی بہتریں کارکردگی کی بنا پر خاموش کر دیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ وہ تنقید سے پریشان نہیں ہوتے اور اس سے حوصلہ اور اپنے آپ کو درست کرنے کا موقع ملتا ہے۔

اظہر جن پر ہمیشہ یہ تنقید ہوتی ہے کہ وہ تیز نہیں کھیلتے انھوں نے آج فخر زمان سے پہلے نصف سنچری سکور کی اور انسٹھ رن بنا کر رن آوٹ ہو گئے۔

اظہر نے کہا کہ بعض اوقات پاکستان میں تنقید حد سے زیادہ بڑھ جاتی ہے جس پر تکلیف ہوتی ہے۔

اپنے رن آوٹ ہونے پر انھوں نے کہا کہ انھیں خدا پر پورا یقین ہے اور آج جتنے رن ان کے حصہ میں لکھ دیے گئے تھے انھوں نے وہی ہی بنائے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں