سنسنی خیز مقابلے کے بعد انگلینڈ ویمن ورلڈ کپ کا فاتح

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption انگلینڈ کی طرف سے شربسول سب سے کامیاب بولر رہیں

لندن میں لارڈز کے میدان میں انڈیا اور انگلینڈ کے درمیان ہونے والے ویمن ورلڈ کپ کے فائنل میں انگلینڈ نے ایک سنسنی خیز مقابلے کے بعد انڈیا کو نو رنز سے شکست دے دی ہے۔

انگلینڈ نے پہلے کھیلتے ہوئے 228 رنز بنائے تھے اور انڈیا کو میچ جیتنے کے لیے 229 رنز کا ہدف دیا۔

انڈیا کی پوری ٹیم جیت کے بہت قریب پہنچ کر 48.4 ویں اوور میں 219 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی۔

انگلینڈ کی طرف سے شربسول سب سے کامیاب بولر رہیں۔ انھوں نے 46 رنز دے کر چھ کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔ انھیں پلیئر آف دی میچ کا بھی ایوارڈ دیا گیا۔ انگلینڈ کی ٹیمی بومونٹ کو پلیئر آف دی ٹورنامنٹ کا ایوارڈ دیا گیا۔

تفصیلی سکور کارڈ

'لڑکوں کے ساتھ کھیلنے پر مجبور تھی'

’مجھے اپنی قسمت پر یقین نہیں آتا‘

’سخت مقابلوں سے ویمن کرکٹ میں دلچسپی بڑھے گی‘

انڈیا کی طرف سے پونم روت اور ہرمن پریت کور نے سب سے زیادہ سکور کیا اور دونوں نے ہی نصف سنچریاں بنائیں۔ ان کے علاوہ صرف کرشنا مورتی ہی 35 رنز بنا پائیں۔

سیمی فائنل میں 171 رنز کی شاندار اننگز کھیلنے والی ہرمن پریت کور نے فائنل میں بھی عمدہ اننگز کھیلی اور 51 رنز بنانے کے بعد ہارٹلے کی گیند پر بومومنٹ کے ہاتھوں آؤٹ کیچ آؤٹ ہوئیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption ہرمن پریت کور نے فائنل میں بھی اپنی جارحانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کیا

انڈیا کی آخری آؤٹ ہونے والی کھلاڑی گائیکواڈ تھیں جو کوئی رن نہ بنا پائیں۔ اس سے قبل شرما 14 رنز بنا کر آؤٹ ہوئیں۔ شیکھا پانڈے چار رن بنا کر رن آؤٹ ہوئیں۔

سمرتی مندھانا، دیوی، سشما ورما اور جھولن گوسوامی بغیر کوئی رن بنائے آؤٹ ہوئیں۔

انڈیا کی پہلی آؤٹ ہونے والی کھلاڑی سمرتی مندھانا تھیں جنھیں آنیا شربسول نے بولڈ کیا۔ اس کے بعد کپتان میتھالی راج 17 رنز بنا کر سور کے ہاتھوں رن آؤٹ ہوئیں۔

اس سے قبل انگلینڈ کی ٹیم مقررہ 50 اوورز میں سات وکٹوں کے نقصان پر 228 رنز بنا پائی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption انگلینڈ کی بیٹسمین سارہ ٹیلر ایک شاٹ لگاتے ہوئے

انگلینڈ نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا اور اس کی دونوں اوپنرز نے بڑے پراعتماد انداز میں اننگز کا آغاز کیا۔ لیکن اوپنرز کے آؤٹ ہونے کے بعد یکے بعد دیگرے وکٹیں گرتی چلی گئیں۔

47 کے مجموعی سکور پر گائیکواڈ کی گیند پر اوپنر ونفیلڈ جو بہت عمدہ کھیل رہی تھیں، بولڈ ہو گئیں۔

ان کے کچھ دیر بعد دوسری اوپنر بومونٹ انڈین بولر پونم یادو کی ایک فل ٹاس گیند کو اونچا کھیلتے ہوئے گوسوامی کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہو گئیں۔ اس وقت کل سکور 60 تھا۔ دونوں اوپنر نے بالاترتیب 24 اور 23 رنز بنائے۔

انڈیا کو جلد ہی تیسری وکٹ اس وقت ملی جب نائٹ صرف ایک رن سکور کر کے پونم کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہو گئیں۔

انگلینڈ کی چوتھی وکٹ 146 کے سکور پر گری جب وکٹ کیپر سارہ ٹیلر 45 رنز بنانے کے بعد جھولان گوسوامی کی گیند پر دیوی کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئیں۔ 146 کے سکور پر ہی انگلینڈ کی پانچویں وکٹ گری جب گوسوامی نے ولسن کو صفر پر آؤٹ کر دیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption جھولان گوسوامی نے تین کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا

انگلینڈ کی بیٹسمین سور نے بہترین بیٹنگ کرتے ہوئے اپنی نصف سنچری مکمل کی لیکن وہ بھی گوسوامی کی عمدہ بولنگ کا شکار بنی اور 51 کے سکور پر ایل بی ڈبلیو اْؤٹ ہو گئیں۔

جب سکور 196 پر پہنچا تو برنٹ 34 رنز بنانے کے بعد شرما کے ہاتھوں رن آؤٹ ہو گئیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ ICC

آخری اوورز میں گن اور مارش نے تیز کھیل کر سکور کو 196 سے 228 پر پہنچا دیا۔ دونوں کھلاڑی ناٹ آؤٹ رہیں۔

فائنل میں انگلینڈ اور انڈیا دونوں ہی نے ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی ہے۔

اس سال ویمن کرکٹ ورلڈ کپ کے فائنل کی تمام ٹکٹیں شروع ہی میں فروخت ہو گئی تھیں۔

ویمن ورلڈ کپ میں انگلینڈ نے پہلا میچ ہارنے کے بعد اپنے تمام میچ جیتے ہیں۔ اس سے قبل انگلینڈ نے 1973، 1993 اور 2009 میں ویمن ورلڈ کپ جیتے ہیں۔

اس سال ویمن ورلڈ کپ 130 سے زیادہ ممالک میں لائیو دکھایا گیا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں