لاہور میں سری لنکا،پاکستان کے ٹی 20 میچ کا امکان

سری لنکا، پاکستان تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

سری لنکن کرکٹ بورڈ کے صدر تھلنگا سوماتھی پالا نے کہا ہے کہ وہ چاہتے ہیں کہ ان کی ٹیم پاکستان کے خلاف ستمبر میں کم ازکم ایک ٹی ٹوئنٹی میچ لاہور میں کھیلے۔

سنیچر کو اے سی سی کے اجلاس کے بعد عشائیے کے موقع پر دیے جانے والے بیان میں تھلنگا سوماتھی پالا نے بتایا کہ 'میری خواہش ہے کہ میری ٹیم پاکستان جائے۔'

سرفراز کی عمدہ بیٹنگ، پاکستان سیمی فائنل میں

’فہیم میں ٹیلنٹ ہے اسے نہ روکیں‘

سری لنکن کرکٹ بورڈ کی جانب سے جاری کردہ تحریری بیان میں بتایا گیا ہے کہ تھلنگا سوماتھی پالا نے بتایا کہ سری لنکا کے سکیورٹی ماہرین نے پاکستان کا دورہ کیا ہے اور چیزیں مثبت لگ رہی ہیں۔

بیان کے مطابق پورے ملک میں صورتحال بہتر ہوتی دکھائی دے رہی ہے خاص طور پر لاہور کلیئر ہو رہا ہے۔ ‘

ان کا کہنا تھا کہ ’ستمبر میں پاکستان کے ساتھ ہمارے تین ٹی ٹوئنٹی میچز ہیں اور ہم چاہیں گے کہ اس میں سے کم ازکم ایک میچ لاہور میں کھیلا جائے۔‘

انھوں نے اے سی سی کے ممبران سے کہا کہ وہ تمام ممبران کو دعوت دیتے ہیں کہ وہ پاکستان کی حمایت میں اپنا کردار ادا کریں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ رسک ہمیشہ ہوتا ہے جیسے لندن میں چیمپیئنز ٹرافی کے دوران دو حملے ہوئے لیکن آئی سی سی کی سکیورٹی گارنٹی ملنے پر میچ جاری رہے۔

ان کا کہنا تھا کہ کرکٹ کی ترقی کے لیے پورے ایشیائی خطے میں مواقع موجود ہیں۔

تھلنگا سوماتھی پالا کا کہنا تھا کہ جب سری لنکا دہشت گردی کا شکار تھا تو وہاں کوئی ٹیم نہیں آنا چاہتی تھی لیکن اس وقت پاکستان اور انڈیا سری لنکا کے ساتھ کھڑے ہوئے تھے۔

پاکستانی کرکٹ بورڈ کے چیئرمین نجم سیٹھی نے جو کہ اب اے سی سی کے چیئرمین بھی ہیں شرکا کو پاکستان میں سکیورٹی کے انتظامات کے بارے میں آگاہ کیا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ اگر تمام لاجسٹکس اور آپریشنل پلان درست ہوئے تو سری لنکا تین میں سے ایک ٹی ٹوئنٹی پاکستان کے شہر لاہور میں کھیلے گا۔

.

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں