آزادی کپ: پاکستان نے ورلڈ الیون کو 33 رنز سے شکست دے دی

کرکٹ تصویر کے کاپی رائٹ AFP

لاہور کے قذافی سٹیڈیم میں کھیلے جانے والے آزادی کپ کے تیسرے اور آخری ٹی20 میچ میں پاکستان نے ورلڈ الیون کو 33 رنز سے شکست دے کر سیریز 2-1 سے جیت لی ہے۔

ورلڈ الیون کے کپتان فاف ڈوپلیسی نے ٹاس جیت کر پہلے پاکستان کو کھیلنے کی دعوت دی تھی۔ پاکستان کے 183 رنز کے جواب میں ورلڈ الیون کو پہلا نقصان اوپنر تمیم اقبال کی صورت میں ہوا جنھیں عثمان خان نے آؤٹ کیا۔ انھوں نے 10 گیندوں پر تین چوکوں کی مدد سے 14 رنز بنائے تھے۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

دوسرے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی کٹنگ تھے جو فقط پانچ رنز بنا پائے جبکہ اگلی ہی گیند پر ہاشم آملہ کو رن آؤٹ ہوگئے وہ 21 رنز بنا پائے۔

چوتھے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی جارج بیلی تھے جو تین رنز بنا پائے۔

ڈوپلیسی 13 رنز بنا پائے انھیں شاداب خان نے آؤٹ کیا۔

ورلڈ الیون کو چھٹا نقصان پریرا کے آؤٹ ہونے کی صورت میں ہوا۔ انھیں رومان ریئس کی بال پر بابر اعظم نے کیچ آؤٹ کیا۔ انھوں نے دو چوکوں اور تین چھکوں کی مدد سے 33 رنز بنائے۔

ڈیوڈ ملر نے 32 رنز بنائے تھے جب انھیں حسن علی کی بال پر بابر اعظم نے کیچ آؤٹ کیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

ڈیرن سیمی کا ساتھ دینے کے لیے مورنی مورکل آئے تاہم انھیں بابر اعظم نے دوسری ہی بال پر رن آؤٹ کر دیا۔

ڈیرن نے 24 رنز بنائے اور وہ ناٹ آؤٹ رہے۔

اس سے قبل پاکستان نے 20 اوورز میں چار وکٹوں کے نقصان پر 183 رنز بنائے۔

جمعے کی شام مقامی وقت کے مطابق سات بجے جب کھیل کا آغاز ہوا تو پاکستانی بلے بازوں نے پراعتماد انداز میں کھیل شروعات کیں۔

پاکستانی اوپنر فخر زمان سیمی کے ہاتھوں27 رنز پر رن آؤٹ ہوئے۔

انھوں نے 25 گیندوں پر ایک چھکے اور دو چوکوں کی مدد سے 27 رنز بنائے تھے جبکہ احمد شہزاد نے بابر اعظم کے ہمراہ پراعتماد انداز میں کریز سھنبالی۔

شہزاد نے 55 گیندوں پر آٹھ چوکوں اور تین چھکوں کی مدد سے 89 رنز بنا کر رن آؤٹ ہوئے۔

تیسرے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی بابر اعظم تھے جو 48 رنز پر کیچ آؤٹ ہو گئے۔ انھوں نے پانچ چوکوں کی مدد سے 33 گیندوں پر 48 رنز بنائے۔

عماد وسیم کوئی رن نہ بنا پائے ان کی جگہ سرفراز کریز پر آئے۔

شعیب ملک 17 رنز پر ناٹ آؤٹ رہے۔

سیریز کے پہلے میچ میں پاکستان نے جب کہ دوسرے میچ میں ورلڈ الیون نے ایک سنسنی خیز مقابلے کے بعد آخری اوور کی پانچوں گیند پر پاکستان کو شکست دی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption شہزاد نے 55 گیندوں پر آٹھ چوکوں اور تین چھکوں کی مدد سے 89 رنز بنا کر رن آؤٹ ہوئے

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں