انڈیا کو چوتھے ٹیسٹ میں شکست

وریندر سہواگ تصویر کے کاپی رائٹ Other
Image caption سہواگ ایک بار پھر اچھی بیٹنگ نہیں کر سکے

انگینڈ نے سیریز کے چوتھے اور آخری ٹیسٹ میچ میں انڈیا کو ہرا دیا ہے۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

انڈیا کی پہلی اننگز کی خاص بات اوپنر راہول ڈراوڈ کی شاندار بیٹنگ تھی۔ انہوں نے ناقابلِ شکست ایک سو چھیالیس رنز بنائے۔

انگلینڈ کی طرف سے سوان اور بریسنن نے تین تین جبکہ اینڈرسن اور براڈ نے دو دو وکٹیں حاصل کیں۔

اتوار کے روز جب انڈیا نے اپنی اننگز شروع کی تو اس کا سکور ایک سو تین تھا اور اس کی پانچ کھلاڑی آؤٹ ہوئے تھے۔

انڈیا کی چھٹی وکٹ اس وقت گری جب مہندر سنگھ دھونی سترہ رنز بنا کر اینڈرسن کی گیند پر پرائر کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔

راہول ڈراوڈ اور مشرا کے مابین ستاسی رنز کی شراکت ہوئی۔ اس شراکت کا اختتام اس وقت ہوگ جب مشرا تینتالیس رنز بنا کر بریسنن کی گیند پر بیل کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔

انڈیا کی آٹھویں وکٹ اس وقت گری جب گوتم گمبھیر دس رنز بنا کر سٹیورٹ براڈ کی گیند پر پیٹرسن کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔

انڈیا کے نویں آؤٹ ہونے والے کھلاڑی آر پی سنگھ تھے جو پچیس رنز بنا کر بریسنن کی گیند پر اینڈرسن کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔ اسی سکور پر انڈیا کی آخری وکٹ بھی گر گئی جب سری سانت بغیر کوئی رن بنائے بریسنن کی گیند پر بریسنن کی گیند پر مورگن کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔

اس سے پہلے انگلینڈ نے پانچ سو اکیانوے رنز چھ وکٹ پر اپنی پہلی اننگز ختم کرنے کا اعلان کر دیا تھا اور انڈیا کو فالو آن سے بچنے کے لیے تین سو اکیانوے رنز بنانے تھے۔

انگلینڈ کی خاص بات ائین بیل اور کیون پیٹرسن کی شاندار بیٹنگ تھی۔ دونوں بلے بازوں نے میچ کے دوسرے روز تیسری وکٹ کے لیے تین سو پچاس رنز کی شراکت قائم کی۔ کیون پیٹرسن نے ستائیس چوکوں کی مدد سے ایک سو پچھہتر رنز کی دلکش اننگز کھیلی۔ بیل دو سو پینتیس رن بنا کر آؤٹ ہوئے۔

بھارت کی جانب سے سری سانت نے تین کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا جبکہ سریش رائینا نے دو اور ایشانت شرما نے ایک وکٹ حاصل کی۔

اس میچ میں انگلینڈ نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔

اسی بارے میں