’معاملات بہتر کرنا چاہتا ہوں‘ کنیریا

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption دانس کنیریا نے پاکستان کے لیے ٹیسٹ کرکٹ میں دو سو اکسٹھ وکٹیں حاصل کی ہیں

پاکستان کے لیگ اسپنر دانش کنیریا کا کہنا ہے کہ سندھ ہائی کورٹ میں دائر کردہ ان کی درخواست کا خارج ہونا افسوس ناک ہے لیکن اب وہ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے نئے چیئرمین ذکاء اشرف سے مل کر اپنے معاملات بہتر کرنا چاہتے ہیں۔

دانش کنیریا جنہوں نے اگست سنہ دو ہزار دس سے کوئی بین الاقوامی میچ نہیں کھیلا جبکہ پی سی بی کی جانب سے انہیں قومی ٹیم میں منتخب کرنے کے لیے زیرِغور نہیں لایا جا رہا۔

کراچی سے تعلق رکھنے والے دانش کنیریا نے سندھ ہائی کورٹ میں درخواست دائر کی تھی کہ کرکٹ بورڈ انہیں ٹیم میں منتخب نہیں کر رہا جبکہ کرکٹ ہی ان کا ذریعہ معاش ہے لیکن عدالت نے ان کی درخواست اس لیے خارج کر دی کہ پاکستان کرکٹ بورڈ کے وکیل نے یہ اعتراض کیا تھا کہ یہ معاملہ سندھ ہائی کورٹ کے دائرہ اختیار میں نہیں ہے۔

نامہ نگار مناء رانا کے مطابق پاکستان کے لیے ٹیسٹ کرکٹ میں دو سو اکسٹھ وکٹیں حاصل کرنے والے دانش کنیریا کا کہنا تھا کہ عدالت نے ان کی درخواست خارج کرنے میں کئی ماہ لیے جس سے ان کا بہت وقت ضائع ہو گیا۔

دانش کنریا کے مطابق وہ ذکاء اشرف سے مل کر انہیں اپنا تمام معاملات بتانا چاہتے ہیں اور امید کرتے ہیں کہ پی سی بی کے چیئرمین ان کی بات پر غور کریں گے۔

دانش کنیریا نے کہا کہ انہوں نے کبھی کوئی غیر قانونی کام نہیں کیا اور انہیں آئی سی سی نے بھی کلیئر کر دیا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ برس انگلینڈ کی پولیس نے دانش کنیریا کو سٹے بازی کے الزام میں گرفتار کیا تھا اور پھر ضمانت پر چھوڑ دیا تھا بعد ازاں یہ کیس خارج کر دیا گیا تھا۔

اسی بارے میں