ون ڈے کرکٹ کا نیا عالمی ریکارڈ

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption سہواگ دوسرے بھارتی بلے باز ہیں جنہوں نے ایک روزہ میچوں میں ڈبل سینچری بنائی ہے

بھارت کے شہر اندور میں کھیلے جانے والے چوتھے ایک روزہ میچ میں بھارتی بلے باز وریندر سہواگ نے ون ڈے کرکٹ کی تاریخ کا نیا عالمی ریکارڈ بنایا۔

سہواگ نے یہ کارنامہ جمعرات کو ویسٹ انڈیز کے خلاف پچیس چوکوں اور سات چھکوں کی مدد سے دو سو انیس رنز بنا کر سرانجام دیا۔

سہواگ دنیائے کرکٹ کے دوسرے بلے باز ہیں جنہیں نے ایک روزہ میچ میں ڈبل سنچری بنائی ہے۔

اس سے پہلے یہ ریکارڈ ان کے ہم وطن سچن تندولکر کے پاس تھا۔

سچن تندولکر نے یہ کارنامہ چوبیس فروری سنہ دو ہزار دس کو جنوبی افریقہ کے خلاف سر انجام دیا تھا، اس میچ میں تندولکر نے دو سو رنز بنائے تھے۔

واضح رہے کہ دونوں بھارتی بلے بازوں نے اپنی سرزمین پر ڈبل سینچری بنائی۔

سہواگ نے ون ڈے کرکٹ کی تاریخ کی دوسری ڈبل سنچری ویسٹ انڈیز کے نسبتاً کمزور بالنگ اٹیک کے خلاف بنائی جبکہ سچن تندولکر نے جنوبی افریقہ کے مضبوط بالنگ اٹیک کے خلاف یہ کارنامہ سرانجام دیا تھا۔

ایک روزہ میچوں کی تاریخ میں وریندر سہواگ نے آٹھ دسمبر سنہ دو ہزار گیارہ کو ویسٹ انڈیز کے خلاف پچیس چوکوں اور سات چھکوں کی مدد سے دو سو انیس رنز بنائے۔

بھارت کے سچن تندولکر نے چوبیس فروری سنہ دو ہزار دس کو گوالیار میں جنوبی افریقہ کے خلاف پچیس چوکوں اور تین چھکوں کی مدد سے ناقابلِ شکست دو سو رنز بنائے۔

زمبابوے کے چارلس کنونٹری نے سولہ اگست سنہ دو ہزار نو کو بلاوائیو میں بنگلہ دیش کے خلاف سولہ چوکوں اور سات چوکوں کی مدد سے ایک سو چورانوے رنز بنائے۔

پاکستان کے سعید انور نے اکیس مئی سنہ انیس سو ستانوے کو چنائی میں بھارت کے خلاف بائیس چوکوں اور پانچ چھکوں کی مدد سے ایک سو چورانوے رنز بنائے۔

ویسٹ انڈیز کے سر ویون رچرڈز نے اکتیس مئی سنہ انیس سو چوراسی کو مانچسٹر میں انگلینڈ کے خلاف اکیس چوکوں اور پانچ چھکوں کی مدد سے ایک سو نواسی رنز بنائے۔

سری لنکا کے جے سوریا نے انتیس اکتوبر سنہ دو ہزار کو شارجہ میں بھارت کے خلاف اکیس چوکوں اور چار چھکوں کی مدد سے ایک سو نواسی رنز بنائے۔

جنوبی افریقہ کے گیری کرسٹن نے سولہ فروری سنہ انیس سو چھیانوے کو راولپنڈی میں یو اے ای کے خلاف تیرہ چوکوں اور چار چھکوں کی مدد سے ایک سو اٹھاسی رنز بنائے۔

اسی بارے میں