میر پور: بنگلہ دیشی ٹیم مشکلات کا شکار

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption عمر گل نے لگاتار دو گیندوں پر دو وکٹیں حاصل کیں

بنگلہ دیش کے شہر میر پور میں کھیلے جار ہے دوسرے ٹیسٹ میچ کے چوتھے دن کھیل کے اختتام پر بنگلہ دیش نے اپنی دوسری اننگز میں پانچ وکٹ کے نقصان پر ایک سو چودہ رن بنا لیے ہیں۔

جب کھیل ختم ہوا تو کپتان مشفق الرحیم سات اور ناصر حسین تیس رن پر ناٹ آؤٹ تھے اور بنگلہ دیش کو پاکستان کی برتری کے خاتمے کے لیے مزید پندرہ رن درکار تھے۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

اس سے پہلے پاکستان کی پوری ٹیم اپنی پہلی اننگز میں بنگلہ دیش کے تین سو اڑتیس رنز کے جواب میں چار سو ستّر رن بنا کر آؤٹ ہوگئی تھی۔

چوتھے دن پاکستان کی اننگز کی خاص بات کپتان مصباح الحق اور عدنان اکمل کی نصف سنچریاں تھیں۔ مصباح سّتر جبکہ عدنان ترپّن رن بنا کر آؤٹ ہوئے۔

اس کے علاوہ یونس خان ایک رن کی کمی سے نصف سنچری نہ بنا سکے جبکہ اسد شفیق نے اکتالیس رن بنائے۔

شکیب الحسن نے بنگلہ دیش کی طرف سے چھ وکٹیں حاصل کیں جبکہ ناظم الحسین کو دو اور اسلام اور الیاس سنی کو ایک ایک وکٹ ملی۔

ایک سو بتیس رن کے خسارے کا سامنا کرتے ہوئے جب بنگلہ دیش نے دوسری اننگز شروع کی تو چوبیس کے مجموعی سکور پر اس کی لگاتار دو وکٹیں گر گئیں۔ بعد میں بھی بنگلہ دیشی بلے باز کوئی بڑی شراکت قائم کرنے میں ناکام رہے اور وکٹیں گرنے کا سلسلہ جاری رہا۔

بنگلہ دیش کے آخری آؤٹ ہونے والے بلے باز پہلی اننگز میں سنچری بنانے والے شکیب الحسن تھے جنہیں اعزاز چیمہ نے کیچ کروایا۔

پاکستان کی جانب سے اعزاز چیمہ اور عمر گل نے دو، دو جبکہ عبدالرحمان نے ایک وکٹ حاصل کی۔

اس میچ میں پاکستان نے ٹاس جیت کر بنگلہ دیش کو بیٹنگ کی دعوت دی تھی اور بنگلہ دیش کی ٹیم اپنی پہلی اننگز میں تین سو اڑتیس رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی تھی۔

دو ٹیسٹ میچوں پر مشتمل سیریز میں پاکستان کو ایک صفر کی برتری حاصل ہے۔ چٹاگانگ میں کھیلے جانے والے پہلے ٹیسٹ میچ میں پاکستان نے بنگلہ دیش کو ایک اننگز اور ایک سو چوراسی رنز کے بڑے مارجن سے شکست دی تھی۔

اسی بارے میں