کاؤنٹی کھلاڑی سپاٹ فکسنگ میں’مجرم‘

تصویر کے کاپی رائٹ PA
Image caption عدالت ویسٹ فیلڈ کی سزا کا تعین فروری میں کرے گی

ایسیکس کاؤنٹی کے ایک سابق کھلاڑی مرون ویسٹ فیلڈ نے عدالت کے سامنے تسلیم کیا ہے کہ انہوں نےایک کاؤنٹی میچ میں سپاٹ فکسنگ کی تھی۔

تیئس سالہ میرون ویسٹ فیلڈ نے عدالت کے سامنے تسلیم کیا ہے کہ انہوں نے پانچ ستمبر 2009 میں ڈرہم کاؤنٹی کے خلاف ایک میچ میں بدعنوانی کی رقم کے عوض پہلا اوور ایسا کروایا تاکہ حریف کاؤنٹی کے کھلاڑی مخصوص تعداد میں رنز بنا سکیں۔

ویسٹ فیلڈ نے عدالت کو بتایا کہ یہ سب کچھ انہوں نے رقم کی وصولی کےلیے کیا تھا۔ اولڈ بیلی کی عدالت نے ویسٹ فیلڈ کو خبردار کیا ہے کہ انہیں قید کی سزا سنائی جا سکتی ہے۔

عدالت نے ویسٹ فیلڈ کو غیر مشروط ضمانت پر رہا کر دیا ہے۔میرون فیلڈ کی سزا کا تعین فروری میں گا۔ اس جرم کے تحت انہیں دس سال تک قید کی سزا سنائی جا سکتی ہے۔

ویسٹ فیلڈ کے خلاف ایک دوسرے شخص کو دھوکہ دہی میں مدد کرنے کا مقدمہ زیر التوا رہنے دیا گیا ہے۔

اسی بارے میں