ہمارا ہدف صف اول کی ٹیم بننا ہے، محسن خان

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service

پاکستان کی کرکٹ ٹیم کے کوچ محسن خان کا کہنا ہے کہ پاکستانی ٹیم میں دنیا کی بہترین ٹیم بننے کی صلاحیت موجود ہے اور ہمارا ہدف یہی ہونا چاہئے کہ اسے ٹیسٹ اور ون ڈے کی بہترین ٹیموں میں لاتے ہوئے بالآخر نمبر ایک ٹیم بنایا جائے۔

محسن خان جنہیں وقار یونس کے استعفے کے بعد پاکستانی کرکٹ ٹیم کا عبوری کوچ بنایا گیا ہے اس بارے میں کوئی بات نہیں کرنا چاہتے کہ اس شاندار کارکردگی کے باوجود انہیں کوچ کی حیثیت سے ہٹا کر ڈیو واٹمور یا کسی دوسرے غیر ملکی کو کیوں کوچ بنا دیا جائے؟

انہوں نے کہا کہ ان کی خدمات ہمیشہ پاکستان کے لئے ہیں اور وہ آج جو کچھ بھی ہیں پاکستان کی وجہ سے ہیں۔

محسن خان نے کہا کہ جب وہ کوچ بنے تھے تو انہیں اس ٹیم کی صلاحیتوں کا اندازہ تھا کیونکہ چیف سلیکٹر کی حیثیت سے انہوں نے ہی اظہر علی اور اسد شفیق جیسے باصلاحیت کھلاڑیوں کو ٹیم میں شامل کیا تھا اور اس وقت لوگوں نے ان پر تنقید کی تھی لیکن انہیں معلوم تھا کہ یہ کھلاڑی مشکل صورتحال میں اچھی کارکردگی دکھانے کی اہلیت رکھتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کوچ بننے کے بعد ان کی اولین ترجیح ٹیم کو ذہنی اور جسمانی طور پر مضبوط بنانا تھا اور آج ٹیم کی مستقل مزاج کارکردگی اس کا ثبوت ہے۔

محسن خان نے کہا کہ جب پاکستانی ٹیم نے گزشتہ سال میچز جیتے تو کہا گیا کہ وہ کمزور ٹیموں کےخلاف کامیابیاں حاصل کر رہی ہے لیکن انگلینڈ جیسی بڑی ٹیم کے خلاف اس کی جیت سے پتہ چلتا ہے کہ اس میں بڑی ٹیموں کو بھی ہرانے کا حوصلہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ کوچ کی حیثیت سے ان کی ذمہ داری کھلاڑیوں کے ہنر کو بہتر بنانا، کپتان کے ساتھ گیم پلان بنانا اور کھلاڑیوں میں ذمہ داری کا احساس پیدا کرنا ہے۔ انہیں خوشی ہے کہ ہر کھلاڑی نے یہ ذمہ داری بخوبی نبھائی ہے۔

محسن نے کپتان مصباح کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ وہ ایک سمجھدار کپتان ہیں، کوچ کی عزت کرتے ہیں اور باہمی مشوروں سے کام کرتے ہیں۔

دوسری جانب انگلینڈ کے کوچ اینڈی فلاور کا کہنا ہے کہ دوسرے ٹیسٹ کا آخری دن ہر اس شخص کے لیے بہت تکلیف دہ تھا جو انگلش کرکٹ سے پیار کرتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ بیٹنگ نے مایوس کیا جبکہ کیچز بھی ڈراپ کئے گئے ۔ مونٹی پنیسر نے ٹیم میں واپسی پر اچھی بولنگ کی۔

فلاور نے کہا کہ تین دن تک انگلینڈ کا پلہ بھاری رہا اور ان کی ٹیم میچ جیت سکتی تھی لیکن اس کے بعد خراب بیٹنگ نے سب کچھ بدل دیا۔

اسی بارے میں