سپاٹ فکسنگ، بھارتی بورڈ کا ہنگامی اجلاس

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption تفتیش کے بعد جو لوگ بھی مجرم پائے جائیں گے ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی: سری نواسن

بھارتی کرکٹ کنٹرول بورڈ نے انڈین پریمیئر لیگ کے میچوں میں مبینہ طور پر سپاٹ فکسنگ پر بحث اور کارروائی کے لیے گورننگ کونسل کا ہنگامی اجلاس طلب کر لیا ہے۔

بی سی سی آئی کی جانب سے جاری ہونے والی پریس ریلیز میں کہا گیا ہے کہ چند بھارتی ٹی وی چینلز پر مبینہ طور پر آئی پی ایل میں شریک کھلاڑیوں کے ناقابلِ قبول اقدامات کے بارے میں خبر نشر کی جا رہی ہے۔

کرکٹ بورڈ کا کہنا ہے کہ وہ ’قوانین کی کسی خلاف ورزی اور کسی بھی قسم کی بدعنوانی کو برداشت نہیں کرے گا‘۔

بھارت میں کرکٹ سے متعلق معاملات کی نگرانی کرنے والے ادارے کا کہنا ہے کہ سٹنگ آپریشن سے متعلق تمام فوٹیج ٹی وی چینلز سے حاصل کی جائے گی اور پھر اس کا تفصیلی تجزیہ کیا جائے گا۔

بی سی سی آئی کے سیکرٹری سنجے جگدلے کی جانب سے بھیجی گئی پریس ریلیز میں کہا گیا ہے، ’گورننگ کونسل کا ہنگامی اجلاس طلب کیا گیا ہے تاکہ اس فوٹیج کا جائزہ لیا جائے اور مناسب اور سخت اقدامات کیے جائیں‘۔

خیال رہے کہ خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی کے مطابق ایک بھارتی ٹی وی چینل نے ’سٹنگ آپریشن‘ کر کے آئی پی ایل میں حصہ لینے والے کھلاڑیوں، منتظمین، مالکان اور کھیل کے بڑے ناموں کے درمیان جاری گھپلوں کا بھانڈا پھوڑنے کا دعوی کیا ہے۔

چینل کے مطابق اس آپریشن کے دوران کئی کھلاڑیوں نے اعتراف کیا ہے کہ انہیں نیلامی میں ظاہر کی گئی بولی سے کہیں زیادہ پیسے ملتے ہیں۔

پی ٹی آئی کے مطابق سٹنگ آپریشن کے دوران یہ بات سامنے آئی کہ صرف آئی پی ایل نہیں بلکہ ابتدائی درجے کے میچوں میں بھی ’فکسنگ‘ ہو رہی ہے۔

خبر رساں ادارے نے بي سي سي آئي کے سربراہ این شری نواسن کے حوالے سے کہا ہے کہ تنظیم اس سٹنگ آپریشن کا ٹیپ حاصل کرے گی اور اس کی تفتیش کے بعد جو لوگ بھی مجرم پائے جائیں گے ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔

کرکٹ کے کھیل میں حالیہ برسوں میں میچ فکسنگ کا معاملہ ابھر کر سامنے آیا ہے۔

اسی بارے میں