ومبلڈن کا شاہین دوبارہ مل گیا

تصویر کے کاپی رائٹ PA
Image caption روفس کی ٹانگ پر معمولی زخم ہے اور اسے دوبارہ کام پر جانے سے پہلے چند روز آرام کرنے کی ضرورت ہو گی: پولیس ترجمان

لندن میں ومبلڈن گرینڈ سلام ٹینس مقابلوں کے دوران کبوتروں کو میدان سے دور رکھنے میں مدد دینے والا شاہین چوری ہونے کے تین دن بعد مل گیا ہے۔

جمعرات کو روفس نامی اس شاہین کو جنوب مشرقی لندن میں اس کے سفری ڈبے سے چوری کیا گیا تھا۔

اس باز کے مالک نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ایک پیغام میں کہا ہے کہ’روفس کی صحت ٹھیک اور خیریت سے ہے۔ ہمیں اس کے ملنے پر بے انتہا خوشی ہے۔‘

جمعرات کی رات کو روفس چوری ہوا تھا اور جمعہ کی صبح لوگوں کی ایک بڑی تعداد نے روفس کے سفری ڈبے کے بارے میں اطلاع دی۔

اس سفری ڈبے کو تیار کرنے والے مارٹن انڈروڈ کے مطابق ایک شخص نے انہیں فون کر کے کہا کہ’مجھے ایک ایسی چیز ملی ہے جس کا تعلق آپ سے ہے۔‘

مارٹن انڈروڈ کے مطابق اس وقت تک انہیں یہ معلوم نہیں تھا کہ روفس چوری ہو چکا ہے تاہم اطلاع دینے والا شخص پولیس ملازم یا اس کا تعلق خیراتی ادارے’ آر ایس پی سی اے‘ سے تھا۔

لندن پولیس کی ایک ترجمان کے مطابق روفس کو خیراتی ادارے کے جانوروں کے ہسپتال میں حوالے کیا گیا۔

ترجمان کے مطابق’روفس کی ٹانگ پر معمولی زخم ہے اور اسے دوبارہ کام پر جانے سے پہلے چند روز آرام کرنے کی ضرورت ہو گی۔‘

چار سالہ روفس کو ومبلڈن کے مرکزی سٹیڈیم میں صبح کے وقت تماشائیوں کے آنے سے پہلے کبوتروں کو ڈرانے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔

اسی بارے میں