راجر فیڈرر نے پیٹ سیمپراس کا ریکارڈ توڑ دیا

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption راجر فیڈرر نے اب تک سترہ گرینڈ سلیم مقابلے جیتے جس میں حالیہ دنوں میں ومبلڈن کی فتح بھی شامل ہے۔

منگل کو راجر فیڈرر نے مسلسل دو سو ستاسی ہفتے عالمی نمبر ایک رہ کر پیٹ سیمپراس کا ایک اور عالمی ریکارڈ توڑ دیا۔ ومبلڈن میں اینڈی مرے پر فتح کے بعد انہوں نے پیٹ سیمپراس کا ریکارڈ برابر کیا تھا جو اس ہفتے ٹوٹ گیا۔ فیڈرر نے یہ سفر تیس مئی دو ہزار دس کو شروع کیا تھا۔

ومبلڈن جیتنے کے بعد تیس سالہ فیڈرر کل سترہ گرینڈ سلیم جیت چکے ہیں جن میں سات ومبلڈن شامل ہیں۔ فیڈرر عالمی نمبر دو نوواک جوکووچ سے پچھتر پوائنٹس کی برتری پر ہیں جس کی بنیاد پر یہ وثوق سے کہا جا سکتا ہے کہ وہ اولمپکس تک اپنا یہ اعزاز برقرار رکھیں گے۔ انہوں نے اس سال پانچ ٹائٹلز جیتے۔

فیڈرر نے اس موقع پر کہا کہ ’میرے لیے بہت فخر اور اعزاز کی بات ہے کہ میں نے سیمپراس کا ریکارڈ توڑا کیونکہ وہ میرے بچپن کے ہیرو تھے اور میں ہمیشہ ان کی طرف عزت سے دیکھا کرتا تھا۔‘

’نمبر ایک کے درجے پر آنا میرے لیے بہت حیران کن احساس ہے۔ میں نے اپنی ٹیم کے ساتھ یہ وعدہ کیا تھا کہ میں نے رینکنگ کے اوپر آنا ہے لیکن مجھے کھیل میں اپنے معیار کو مد نظر رکھتے ہوئے یہ نہیں پتا تھا کہ میں اسے اتنی جلدی واپس حاصل کر لوں گا۔‘

پیٹ سیمپراس نے فیڈرر کی اس کامیابی پر کہا کہ ‘کھیل کی دنیا میں سب سے مشکل کام ہے سرفہرست رہنا اور راجر اپنے بہترین کھیل اور مستقل مزاجی کی وجہ سے یہ کرنے میں کامیاب ہوئے ہیں۔‘

اس سال اگست میں اکتیس برس کے ہونے والے فیڈرر آندرے آگاسی کے بعد ٹینس کے دوسرے کھلاڑی ہیں جنہوں نے یہ عالمی نمبر ایک کا اعزاز اس عمر میں حاصل کیا ہے۔

فیڈرر نے جوکووچ سے اپنی یو ایس اوپن کے فائنل کی شکست کے بارے میں کہا کہ ’میں سمجھتا ہوں کہ وہ ایسا لمحہ تھا جب مجھے اپنے آپ کو یہ یقین دلانا تھا کہ حالات میرے لیے تبدیل ہوں گے۔ میں سمجھتا ہوں کہ جب میں بازل واپس آیا جو کہ میرا مقامی ٹورنامنٹ ہے تب حالات میری جیت کی طرف تبدیل ہوئے۔ پھر اس کے بعد میرا حوصلہ مزید بڑھا جب میں پیرس اور پھر لندن گیا۔ میں سمجھتا ہوں کہ یہ وہ موقع تھا جب مجھے لگا کہ سال دو ہزار میں بہت کچھ ممکن ہے۔‘

فیڈرر فروری دو ہزار چار میں پہلی بار عالمی نمبر ایک بنے اور اگست دو ہزار آٹھ تک انہوں نے یہ برتری برقرار رکھی۔ اس کے بعد انہوں نے جولائی دو ہزار نو میں دوبارہ یہ برتری حاصل کی۔

اسی بارے میں