برطانیہ مٹ رومنی سے نالاں

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

لندن کے میئر نے امریکہ کے صدارتی انتخاب کے امیدوار مِٹ رومنی کے اس بیان پر تنقید کی ہے کہ جس میں انہوں نے کہا تھا کہ برطانیہ اولمپکس مقابلوں کے لیے تیار نہیں ہے۔

لندن کے میئر بورس جانسن نے ہائیڈ پارک میں ایک بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ یہاں ایک صاحب جن کا نام مٹ رومنی ہے وہ یہ جاننا چاہتے ہیں کہ کیا ہم اولمپکس مقابلوں کے لیے تیار ہیں؟

مٹ رومنی نے امریکی نیٹ ورک این بی سی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا تھا کہ لندن کے سکیورٹی گارڈز اور بارڈر سٹاف کی جانب سے ہڑتال کی دھمکی لندن اولمپکس کے لیے حوصلہ افزا نہیں ہے۔

مٹ رومنی کے اس بیان کے بعد برطانوی وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون نے لندن اولمپکس کی تیاریوں کی تعریف کرتے ہوئے لندن اولمپک کی آرگنائزنگ کمیٹی کے کام کو سراہا تھا۔

مٹ رومنی کا یہ بیان لندن اولمپکس دو ہزار بارہ کی مشعل کے ستر روزہ سفر کے آخری دن سامنے آیا جس کے جواب میں لندن کے میئر نے سینٹرل لندن کے ہائیڈ پارک میں ہزاروں افراد سے پوچھا کہ وہ یہ جاننا چاہتے ہیں کہ آیا ہم اولمپکس مقابلوں کے لیے تیار ہیں؟

واضح رہے کہ مٹ رومنی برطانوی وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون سے ملاقات کے بعد اپنے بیان سے پیچھے ہٹ گئے تھے اور انہوں نے لندن اولمپکس مقابلوں کے کامیاب انعقاد کی پیشنگوئی کی۔

برطانوی وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون کی سرکاری رہائش گاہ ٹین ڈاؤننگ سٹریٹ کے باہر صحافیوں سے بات کرتے ہوئے مٹ رومنی نے لندن اولمپکس کی آرگنائزنگ کمیٹی کے کام کی تعریف کی۔

مٹ رومنی رواں برس نومبر میں امریکہ میں منعقد ہونے والے صدارتی انتخابات میں ڈیموکریٹ پارٹی کے امیدوار باراک اوباما کا مقابلہ کریں گے۔

نامہ نگاروں کا کہنا ہے کہ مٹ رومنی کا صدارتی امیدوار کی حیثیت سے یہ پہلا غیر ملکی دورہ ہے۔

اسی بارے میں