ایتھلیٹکس: آسکر کی شاندار کارکردگی

لندن میں جاری تیسویں اولمپکس کھیلوں میں جنوبی افریقہ کے آسکر پسٹوریئس نے تاریخ میں پہلے مصنوعی ٹانگوں والے ایتھلیٹ ہونے کا اعزاز حاصل کیا ہے۔

آسکر کی ٹانگیں بچپن ہی میں ضائع ہو گئی تھیں۔ پچیس سالہ آسکر چار بار پیرا اولمپکس چیمپیئن رہ چکے ہیں۔

ہفتے کو انہوں وہ پہلے ایتھلیٹ بنے جنہوں نے مصنوعی ٹانگوں کے ساتھ اولمپکس کھیلوں میں حصہ لیا۔

وہ چار سو میٹر کی ریس 45.44 سیکنڈ میں مکمل کی اور دوسرے نمبر پر رہے۔

آسکر نے ریس کے بعد بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کہا ’مجھے سمجھ نہیں آ رہی کہ مجھے خوش ہبنا چاہیے یا رونا چاہیے۔

آسکر کو ہرانے والے ڈومینیکن ریپبلک کے سانتوس تھے جنہوں نے یہ ریس 45.04 سیکنڈ میں مکمل کی۔

آسکر نے زمید کہا ’میں ان سب کا شکر گزار ہوں جنہوں نے میری حوصلہ افزائی کی۔ میں اپنے خاندان کا بہت شکر گزار ہوں۔‘

اس سے قبل آسکر نے 2011 میں ہونے والی عالمی چیمپیئن شپ میں حصہ لیا تھا لیکن وہ سیمی فائنل سے آگے نہیں جا سکے۔

آسکر آج چار سو میٹر کی ریلے ریس میں بھی دوڑیں گے۔

اسی بارے میں