پاکستان کرکٹ کھیلنے کے لیے محفوظ: جے سوریا

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 18 اکتوبر 2012 ,‭ 17:06 GMT 22:06 PST

جے سوریا انٹرنیشنل ورلڈ الیون کی کپتانی کریں گے

سری لنکن ٹیم کے سابق کپتان سنتھ جے سوریا کا کہنا ہے کہ وہ سمجھتے ہیں کہ پاکستان انٹرنیشنل کرکٹ کے لیے محفوظ ہے۔

اس ہفتے کے آخر میں انٹرنیشنل ورلڈ الیون اور پاکستان آل سٹارز کے درمیان دو ٹی ٹوئنٹی میچ منعقد ہوں گے۔

جے سوریا جمعرات کو کراچی پہنچے جہاں وہ انٹرنیشنل ورلڈ الیون کی کپتانی کریں گے۔

ان نمائشی میچوں کا انعقاد کھیلوں کے صوبائی وزیر ڈاکٹر محمد علی شاہ نے کیا ہے اور انہیں امید ہے کہ اس سے دنیائے کرکٹ کو ایک مثبت پیغام پہنچے گا۔

دو ہزار نو میں سری لنکا کی ٹیم پر لاہور میں ہونے والے حملے کے بعد ٹیسٹ کھیلنے والی کسی ٹیم نے پاکستان کا دورہ نہیں کیا ہے۔

جے سوریا اس حملے کی زد میں آنے والی ٹیم کا حصہ نہیں تھے۔ ان کا کہنا تھا کہ ’یہ ہر ملک پر ہے (کہ وہ پاکستان کا دورہ کرنا چاہتے ہیں یا نہیں) لیکن میرے خیال میں پاکستان ایک محفوظ ملک ہے۔‘

’لاہور میں پیش آنے والا واقعہ افسوسناک تھا لیکن پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ کا نہ ہونا بدقسمتی ہے کیوں کہ یہاں کے لوگ اس کھیل سے محبت کرتے ہیں۔‘

پاکستان کرکٹ بورڈ نے شاہد آفریدی، یونس خان اور شعیب ملک کو آل سٹارز کی طرف سے کھیلنے کی اجازت دی ہے۔

اطلاعات کے مطابق اس نمائشی میچ میں حصے لینے والے کھلاڑیوں کی سکیورٹی کے لیے پانچ ہزار پولیس اہلکار تعینات کیے جائیں گے۔

ویسٹ انڈیز کے کھلاڑی پاؤل پہلی بار پاکستان کا دورہ کر رہے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ انٹرنیشنل ٹیموں کو پاکستان آنا چاہیے۔

’میرے خیال میں وقت آگیا ہے کہ پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ کو دوبارہ شروع کیا جانا چاہیے۔‘

انٹرنیشنل ورلڈ الیون کی کوچنگ ویسٹ انڈیز کے سابق بلے باز ایلون کالیچرن کریں گے۔ کالی چرن چالیس سال بعد پاکستان آئے ہیں۔ وہ آخری مرتبہ میں پاکستان 1972 میں آئے تھے جب انہوں نے سیلاب متاثرین کے لیے امداد جمع کی تھی۔

کالی چرن کا کہنا تھا کہ ’پاکستان دنیائے کرکٹ کا حصہ ہے اور ہم یہاں یہ دکھانے آئے ہیں کہ پاکستان کرکٹ کھیلنے کی جگہ ہے۔‘

گزشتہ ساڑھے تین سالوں سے پاکستان کی ہوم سیریز کو نیوٹرل مقامات پر منعقد کیا جا رہا ہے جن میں اکثر متحدہ عرب امارات میں منعقد ہوئی ہیں۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔