عبدالرزاق غلطی پر نادم، ایک لاکھ جرمانہ

آخری وقت اشاعت:  ہفتہ 20 اکتوبر 2012 ,‭ 19:33 GMT 00:33 PST

عبدالرزاق کا کہنا تھا کہ وہ اپنی اس غلطی پر شرمندہ ہیں

پاکستان کرکٹ بورڈ نے ضابطۂ اخلاق کی خلاف ورزی پر آل راؤنڈر عبدالرزاق پر ایک لاکھ روپے جرمانہ عائد کیا ہے۔

عبدالرزاق نے ورلڈکپ ٹی ٹوئنٹی کے سیمی فائنل میں نہ کھلانے پر کپتان محمد حفیظ کو تنقید کانشانہ بنایا تھا اور کہا تھا کہ سیمی فائنل میں انہیں نہ کھلانا کپتان کا ذاتی فیصلہ تھا اور اس میں ٹیم انتظامیہ کا کوئی عمل دخل نہ تھا۔

اس بیان پر پی سی بی نے عبدالرزاق کو اظہارِ وجوہ کا نوٹس جاری کیا تھا۔نوٹس میں عبدالرزاق کو ڈسپلن کی خلاف ورزی کا مرتکب قرار دیتے ہوئے ان سے وضاحت طلب کی گئی تھی۔

پی سی بی کے میڈیا مینیجر نے جمعہ کو ذرائع ابلاغ سے بات چیت کے دوران بتایا کہ عبدالرزاق اور محمد حفیظ نے آج چیئرمین پی سی بی سے ملاقات کی جس میں عبدالرزاق نے اپنے بیان پر معذرت کی اور کہا کہ یہ ایک جذباتی حرکت تھی۔

عبدالرزاق اور محمد حفیظ نے جمعہ کو ایک مشترکہ پریس کانفرنس سے بھی خطاب کیا۔ اس موقع پر عبدالرزاق کا کہنا تھا کہ وہ اپنی اس غلطی پر شرمندہ ہیں۔

محمد حفیظ نے کہا کہ یہ واقعہ اب ماضی کا قصہ بن چکا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ تنازعات ہر جگہ ہوتے ہیں لیکن ضروری ہے کہ ماضی کو بھلا کر مستقبل کی فکر کی جائے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔