میر پور ٹیسٹ میں پاول کی دوسری سنچری

آخری وقت اشاعت:  جمعـء 16 نومبر 2012 ,‭ 12:31 GMT 17:31 PST
ڈیرن پاول

ڈیرن پاول نے پہلی اننگز کے بعد دوسری اننگز میں بھی سنچری بنائی۔

میر پور ٹیسٹ کے چوتھے دن کھیل کے اختتام پر ویسٹ انڈیز نے بنگلہ دیش کے خلاف دوسری اننگز میں چھ وکٹوں کے نقصان پر دو سو چوالیس رنز بنا لیے۔

ویسٹ انڈیز کو بنگلہ دیش پر دو سو پنردہ رنز کی برتری حاصل ہو گئی ہے اور ابھی اس کی چار وکٹیں باقی ہیں۔

جمعہ کو چوتھے دن کھیل کے اختتام پر ڈیرن سیمی کریز پر موجود تھے اور انہوں نے ایک چوکے اور ایک چھکے کی مدد سے پندرہ رنز بنائے۔

چوتھے دن گیل نے جارحانہ انداز میں بیٹنگ شروع کی تاہم وہ انیس رنز بنا کر روبیل حسین کا شکار ہو گئے۔

دوسرے اوپننگ بلے باز کیرن پاول نے ڈرین براوو کے ساتھ مل کر 189 رنز کی شراکت داری قائم کی۔

پاول نے پہلی اننگز کی طرح دوسری اننگز میں سنچری سکور کی اور ایک سو دس رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

براوو نے چھہتر رنز بنائے اور وہ بھی روبیل حسین کا شکار ہوئے۔ اس کے بعد ویسٹ انڈیز کی جانب سے کوئی بھی بلے باز جم کر نہ کھیل سکا۔

کلِک میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

بنگلہ دیش کی جانب سے روبیل، سوہاگ غازی اور شکیب الحسن نے دو دو وکٹ لیے۔

چوتھے دن بنگلہ دیش کی پوری ٹیم پانچ سو چھپن رنز پر آؤٹ ہو گئی اس طرح بنگلہ دیش کو ویسٹ انڈیز پر انتیس رنز کی اہم برتری حاصل ہوئی۔

چوتھے دن کے کھیل کی خاص بات ناصر حسین اور محموداللہ کی شاندار اور تیز بلے بازی تھی دونوں نے بالترتیب چھیانوے اور باسٹھ رنز بنائے۔

تیسرے دن کے کھیل کی خاص بات نعیم اسلام اور شکیب الحسن کی ذمہ دارانہ بیٹنگ تھی۔

دونوں بلے بازوں نے چوتھی وکٹ کے لیے ایک سو سٹرسٹھ رنز کی شراکت قائم کر کے اپنی ٹیم کو مشکل سے نکالا۔

بنگلہ دیش کی جانب سے نعیم اسلام نے ایک سو آٹھ جبکہ شکیب الحسن نے نواسی رنز بنائے۔

ویسٹ انڈیز کی جانب سے رام پال نے تین اور ڈیرن سامی نے دو کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

منگل کو شروع ہونے والے ٹیسٹ میچ میں ویسٹ انڈیز نے ٹاس جیت پر بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔

دونوں ٹیموں کے درمیان تین ٹیسٹ میچ کھیلے جائیں گے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔