’انڈیا سیریز میں کوئی بھی فیورٹ نہیں‘

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 20 دسمبر 2012 ,‭ 15:33 GMT 20:33 PST

ٹی ٹوینٹی سریز میں کوئی فیورٹ نہیں

پاکستان کی ٹی ٹونٹی ٹیم کے کپتان محمد حفیظ کا کہنا ہے کہ بھارت میں سیریز کے دوران وہ ٹیم کے مفاد میں اوپنگ کی قربانی دے سکتے ہیں۔

بھارت کے خلاف ٹی ٹونٹی سیریز کے لیے منتخب کردہ ٹیم میں چار اوپنگ بیٹسمین ہیں جن میں ناصر جمشید، احمد شہزاد، کامران اکمل اور خود محمد حفیظ شامل ہیں۔

محمد حفیظ نے کہا کہ ان کا بطور اوپنر ریکارڈ کافی اچھا ہے اور گزشتہ ڈھائی سال سے وہ تینوں طرح کےفارمیٹ میں اوپنگ کے ہائسٹ سکورر رہے ہیں۔ تاہم وہ اوپنگ کریں یا نمبر تین پر جائیں یہ ان کے لیے بڑا ایشو نہیں ہے اور اگر ٹیم کے لیے انہیں کسی بھی نبمر پر بیٹنگ کرنا پڑی تو وہ تیار ہوں گے۔

قذافی سٹیڈیم لاہور میں بھارت کے خلاف سیریز کے لیے لگائے گئےکیمپ کے آخری روز محمد حفیظ نے کہا کہ کیمپ میں ہونے والے پریکٹس میچز سے فائدہ ہوا کیونکہ گزشتہ دو ڈھائی ماہ سے پاکستان کی ٹیم نے انٹرنیشنل کرکٹ نہیں کھیلی تھی۔ انہوں نے کہا کہ ٹیم کے تمام کھلاڑی مثبت سوچ رکھتے ہیں اور خوب تیاری کی ہے اور پوری ٹیم مل کر قوم کو بھارت کے خلاف اچھے نتائج دے گی۔

لاہور میں نامہ نگار مناء رانا کے مطابق محمد حفیظ نے یہ تسلیم کیا کہ بھارت کے خلاف سیریز میں ہمیشہ ہی دباؤ ہوتا ہے اور لوگوں کی دونوں ٹیموں کے ساتھ بہت زیادہ توقعات ہوتی ہیں لیکن ان کی ٹیم کی کوشش ہو گی کہ کسی بھی دباؤ کو خاطر میں نہ لائیں اور اپنی قدرتی صلاحیت کو بروئے کار لائیں۔ حفیظ کے مطابق ٹی ٹونٹی سیریز میں کسی کو بھی فیورٹ نہیں کہا جا سکتا۔

محمد حفیظ نے کہا کہ سعید اجمل پاکستان کی جیت میں کافی عرصے سے اہم کردار ادا کر رہے ہیں لیکن بھارت کے خلاف جیتنے کے لیے ٹیم کے بقیہ بالرز کو بھی ان کا ساتھ دینا ہو گا کیونکہ اگر ہم سعید اجمل کے بارے میں یہی کہتے رہیں کہ وہ ہمارے لیے میچ جیتے گا تو ہم ان پر ایک اضافی بوجھ ڈال رہے ہوں گے۔

حفیظ کے مطابق ماضی میں پاکستان کی ٹیم بھارت میں اس لیے جیتتی تھی کہ ہماری ٹیم کے فاسٹ بالر انہیں دباؤ میں لے آتے تھے اور ان کی اس بار یہی کوشش ہو گی کہ پاکستان کے فاسٹ بالرز سے بھر پور فائدہ حاصل کریں۔ انہوں نے شاہد آفریدی کی پریکٹس میچز میں اچھی کارکردگی کو خوش آئند قرار دیا۔

انہوں نے کہا کہ انگلینڈ کے خلاف شکست کے باوجود وہ بھارتی ٹیم کو آسان حریف نہیں سمجھ سکتے کیونکہ ٹی ٹونٹی اور ون ڈے میں ٹیسٹ میچز سے مختلف کرکٹ کھیلی جاتی ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔