کولکتہ ون ڈے:’اصل دباؤ بھارت پر ہوگا‘

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 3 جنوری 2013 ,‭ 04:54 GMT 09:54 PST

دھونی کا کہنا ہے کہ ان کی ٹیم دوسرے ون ڈے میں کم بیک کرے گی

پاکستان اور بھارت کے مابین ایک روزہ میچوں کی سیریز کا دوسرا اور اہم میچ جمعرات کو کولکتہ میں کھیلا جا رہا ہے۔

چنئی ون ڈے میں شکست کے بعد تین میچوں کی اس سیریز میں فتح کے امکانات روشن رکھنے کے لیے بھارت کو یہ میچ لازماً جیتنا ہو گا جبکہ پاکستانی ٹیم بھی میچ جیت کر سیریز جیتنے کی کوشش کرے گی۔

پاکستانی ٹیم کے کپتان مصباح الحق نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ پاکستان کے کولکتہ میں کامیابی کے سابق ریکارڈ کو برقرار رکھتے ہوئے سیریز میں فیصلہ کن برتری حاصل کرنے کے لیے پرامید ہیں۔

واضح رہے کہ کولکتہ کے ایڈن گارڈنز میں پاکستان کبھی بھی بھارت سے ایک روزہ میچ میں نہیں ہارا۔

ادھر بھارتی کپتان مہندر سنگھ دھونی کا کہنا ہے کہ ان کی ٹیم دوسرے ون ڈے میں کم بیک کرے گی۔

اس سیریز میں بھارتی بلے باز پاکستانی بولرز سے نمٹنے میں ناکام دکھائی دیے ہیں اور ٹیم کے ٹاپ آرڈر کی کارکردگی قابلِ فکر رہی ہے۔ پہلے میچ میں بھارت کے ابتدائی پانچ بلے بازوں میں سے کوئی بھی اپنا انفرادی سکور دوہرے ہندسوں تک نہیں پہنچا پایا تھا۔

چنئی میں شکست کے بعد اگر بھارت کولکتہ کا میچ بھی ہار جاتا ہے تو یہ پندرہ دن کے اندر دوسری ہوم سیریز ہوگی جس میں بھارت کو شکست کا سامنا کرنا پڑے گا۔

اس سے پہلے انگلینڈ نے بھارتی زمین پر 28 سال میں پہلی بار ٹیسٹ سیریز گزشتہ ماہ ہی جیتی ہے۔

ون ڈے کرکٹ سے سچن تندولکر کی ریٹائرمنٹ کے بعد بھارتی شائقین کی بہت زیادیں امیدیں وریندر سہواگ سے وابستہ ہیں۔ تاہم گزشتہ ایک سال میں ان کی کارکردگی کچھ خاص نہیں رہی ہے اور 10 میچوں میں انہوں نے صرف 217 رن بنائے ہیں۔

اس کی اس غیر متاثر کن کارکردگی کا خمیازہ بھارتی ٹیم کو بھگتنا پڑ رہا ہے لیکن اس دوسرے میچ میں صرف سہواگ ہی نہیں بلکہ پوری بھارتی ٹیم پر دباؤ ہے کہ وہ پاکستان کے خلاف جیتے اور ایک روزہ سیریز برابر کرے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔