ریسلنگ اولمپکس مقابلوں سے خارج

آخری وقت اشاعت:  منگل 12 فروری 2013 ,‭ 14:07 GMT 19:07 PST

انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی نے سنہ دو ہزار بیس میں منعقد ہونے والے اولمپکس سے ریسلنگ کو ڈراپ کر دیا ہے۔

کمیٹی کے اعلامیے کے مطابق سنہ دو ہزار بیس کے اولمپکس میں ریسلنگ کی جگہ کسی اور کھیل کو جگہ دی جائے گی۔

اس بات کا فیصلہ انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کے کمیشن نے لندن میں منعقد ہونے والے اولمپکس کے کھیلوں کا جائزہ لینے کے بعد کیا۔

سنہ دو ہزار بیس کے اولمپکس میں ریسلنگ کی جگہ کسی اور کھیل کو جگہ دینے کا فیصلہ انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کے ستمبر میں بیونس آئرس میں ہونے والے اجلاس میں کیا جائے گا۔

دوسری جانب برطانوی ریسلنگ کے چیف ایگزیکٹو کولن نکولسن نے انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کے فیصلے کو مایوس کن قرار دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں امید ہے کہ انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کے ستمبر میں ہونے والے اجلاس میں ریسلنگ کو اولمپکس میں دوبارہ شامل کر لیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ اگر ریسلنگ کو اولمپکس سے نکال دیا گیا تو پوری دنیا میں اس مقبول کھیل کے لیے یہ بہت مایوسی کی بات ہو گی۔

خیال رہے کہ سنہ دو ہزار بیس کے اولمپک مقابلوں میں شامل ہونے کے لیے بیس بال، سافٹ بال، سکواش، کراٹے، سپورٹ کلائمینگ، ویک بورڈنگ، ویشو، رولر سپورٹس اور ریسلنگ کے درمیان مقابلہ ہے۔

اولمپکس میں ریسلنگ کے مقابلوں کا آعاز سنہ اٹھارہ سو چھیانوے میں ایتھنز اولمپکس سے ہوا تھا۔

پیرس میں سنہ انیس سو میں منعقد ہونے والے اولمپکس مقابلوں کے بعد ریسلنگ کا کھیل ہر اولمپکس کا حصہ رہا ہے۔

لندن اولمپکس کے مقابلوں میں ریسلنگ کےکھیل میں تین سو چوالیس ایتھلیٹس نے حصہ لیا تھا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔