’جنوبی افریقہ نے ثابت کیا نمبر ایک ٹیم ہے‘

آخری وقت اشاعت:  پير 18 فروری 2013 ,‭ 14:44 GMT 19:44 PST

پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان عامر سہیل کا کہنا ہے کہ جنوبی افریقہ نے ثابت کر دیا کہ وہ عالمی نمبر ایک ٹیم ہے اور کیپ ٹاون ٹیسٹ میچ میں جنوبی افریقہ اور پاکستان کے معیار میں واضح فرق نظر آیا۔

پاکستان کی کرکٹ جنوبی افریقہ کے خلاف دوسرے ٹیسٹ میچ کے چوتھے روز ہی ہار گئی۔

جنوبی افریقہ کی ٹیم نے اس فتح کے ساتھ لگاتار چھٹی سیریز اپنے نام کی۔

عامر سہیل نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئےکہا کہ جنوبی افریقہ نے کیپ ٹاون کی پچ ایسی بنائی تھی جو پاکستانی بالروں کے لیے سازگار تھی کیونکہ اگر وکٹ پہلے ٹیسٹ جیسی ہوتی تو یہ سیریز بالکل یکطرفہ ہوتی۔

عامر سہیل کے مطابق جنوبی افریقہ نے کیپ ٹاون میں پچ سپنرز کے لیےاس لیے بھی مدد گار بنائی تاکہ وہ خود کو پرکھ سکیں یعنی انہوں نے خود کو چیلنج دیا اور پھر وہ اس چیلنج پر پورا بھی اترے۔

اس سوال پر کہ کیا پاکستان جیتا ہوا میچ ہارا؟ عامر سہیل کا جواب تھا کہ بڑی ٹیم کی پہچان یہی ہوتی ہے کہ وہ مشکل حالات میں کم بیک کرے۔

جنوبی افریقہ کی پہلی اننگز میں جب ایک سو پانچ رنز پر پانچ وکٹیں گر گئیں تو اس نے ہمت نہیں ہاری اور پاکستان کی برتری کو صرف بارہ رنز تک محدود کر دیا۔

عامر سہیل نے کہا کہ عام طور پر پاکستان کی بیٹنگ کو شکست کا ذمہ دار قرار دیا جاتا ہے لیکن وہ یہ سمجھتے ہیں کہ اس ٹیسٹ میچ میں پاکستان کو اس کی بالنگ اور فیلڈنگ نے ہرایا کیونکہ اگر پاکستانی بالرز کوشش کرتے تو جنوبی افریقہ کو دیے گیے ایک سو بیاس رنز کے ہدف کا دفاع بھی کر سکتے تھے۔

ان کے مطابق بائیس فروری سے سنچورین میں شروع ہونے والے تیسرے ٹیسٹ میچ کی وکٹ بھی باؤنسی ہو گی اور وہاں کے حالات بھی پاکستانی ٹیم کے لیے مشکلات پیدا کر سکتے ہیں اس لیے بہت امکان ہے کہ جنوبی افریقہ سیریز میں کلین سویپ کرے۔

انہوں نے کہا کہ کرکٹ کے ارباب اختیار پاکستان کی ٹیم کی ایسی تربیت نہیں کر رہے کہ وہ آسٹریلیا، جنوبی افریقہ اورانگلینڈ جیسی ٹیموں کو ان کے ملک میں شکست دے سکے۔

عامر سہیل نے کہا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ کی اولین ترجیح پاکستان میں سپر لیگ منعقد کروانا نہیں بلکہ پاکستانی کرکٹ ٹیم کے معیار کو بہتر بنانا ہونا چاہیے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔