چنئی ٹیسٹ: سچن اور کوہلی کی نصف سنچریاں

آخری وقت اشاعت:  اتوار 24 فروری 2013 ,‭ 19:36 GMT 00:36 PST

مہندر سنگھ دھونی نے اپنے کیريئر کی چھٹی سنچری لگائی ہے

آسٹریلیا کے خلاف پہلے ٹیسٹ کے دوسرے دن بھارت نے ابتدائی نقصان کے بعد سچن تندولکر اور ویرات کوہلی کی نصف سنچریوں کی بدولت تین وکٹ پر ایک سو بیاسی رنز بنا لیے۔

آسٹریلیا کے 380 رنز کے جواب میں بھارتی اننگز کا آغاز مرلی وجے اور وریندر سہواگ نے کیا لیکن وہ بھارت کو اچھا آغاز دینے میں ناکام رہے اور چوتھے ہی اوور میں پیٹسن نے مرلی وجے کو پویلین واپس بھیج دیا، وہ دس رنز بنا سکے۔

کلِک میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

سہواگ ایک بار پھر ناکام رہے اورگیارہ گیندوں پر صرف دو رنز بنا کر پیٹسن کی دوسری وکٹ بنے۔

اس موقع پر چیتیشور پجارا اور سچن تندولکر نے اننگز کو سنبھالا اور سکور آگے بڑھایا۔ پجارا نے چھ چوكوں کی مدد سے 44 رن بنائے، انہیں بھی پیٹسن نے آؤٹ کیا۔

آسٹریلوی کپتان مائیکل کلارک نے بارہ چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے ایک سو تیس رنز بنائے

پجارا کے آؤٹ ہونے کے بعد حال ہی میں ون ڈے کرکٹ کو الوداع کہنے والے سچن نے ویرات کوہلی کے ساتھ مل کرذمہ دارانہ انداز میں بلے بازی کی اور آسٹریلوی بولرز کو مزید کوئی کامیابی حاصل نہیں کرنے دی۔

اس سے پہلے سنیچر کی صبح آسٹریلیا نے اپنی پہلی اننگز سات وکٹوں کے نقصان پر 31 رنز سے دوبارہ شروع کی تو اس کی پوری ٹیم کھانے کے وقفے سے کچھ دیر پہلے 380 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی۔

آسٹریلیا کی جانب سے کپتان مائیکل کلارک نے سب سے زیادہ 130 رن بنائے جبکہ ہینریكیذ 68 رن بنا کر نمایاں رہے۔

بھارت کی طرف سے روی چندر ایشون نے شاندار بولنگ کرتے ہوئے 103 رنز دے کر سات وکٹ لیے جبکہ رویندر جڈیجہ کو دو اور ہربھجن سنگھ کو ایک وکٹ ملی۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔